ہوم » نیوز » عالمی منظر

نہ پینٹ، نہ شرٹ اور نہ ہی انڈر ویئر، اس بار برہنہ ہوکر بائیک رائیڈ، صرف پہننا ہوگا ماسک

گزشتہ سال کورونا وائرس وبا کے چلتے اس کا انعقاد نہیں ہو سکا تھا لیکن اس بار یہ بائک رائڈ منعقد کی جائے گی لیکن شرط یہ ہے کہ اس میں حصہ لینے والے لوگوں کو ماسک پہن کر آنا ہوگا۔ اس سال اس خاص رائیڈ کا انعقاد 28 کو ہوگا۔

  • Share this:
نہ پینٹ، نہ شرٹ اور نہ ہی انڈر ویئر، اس بار برہنہ ہوکر بائیک رائیڈ، صرف پہننا ہوگا ماسک
گزشتہ سال کورونا وائرس وبا کے چلتے اس کا انعقاد نہیں ہو سکا تھا لیکن اس بار یہ بائک رائڈ منعقد کی جائے گی لیکن شرط یہ ہے کہ اس میں حصہ لینے والے لوگوں کو ماسک پہن کر آنا ہوگا۔ اس سال اس خاص رائیڈ کا انعقاد 28 کو ہوگا۔

ہر سال امریکی شہر فلاڈیفیا (Philadelphia naked  Bike Ride) میں ایک نیکڈ رائڈ کا انعقاد کیا جاتا ہے۔ یہ بیحد ہی مشہور ہے۔ ہزاروں کی تعداد میں لوگ اس بائک رائیڈ میں پہنچتے ہیں۔ گزشتہ سال کورونا وائرس وبا کے چلتے اس کا انعقاد نہیں ہو سکا تھا لیکن اس بار یہ بائک رائڈ منعقد کی جائے گی لیکن شرط یہ ہے کہ اس میں حصہ لینے والے لوگوں کو ماسک پہن کر آنا ہوگا۔ اس سال اس خاص رائیڈ کا انعقاد 28 کو ہوگا۔


فلا ڈیفیا (Philadelphia Bike Ride) میں اس ہفتے کورونا وائرس سے جڑی کئی پاببدیاں ہٹا دی گئی ہیں۔ کورونا کیس بھی بیحد کم آرہے ہیں۔ اس کے علاوہ شہر میں ٹیکہ کاری بھی کافی تیزی سے جاری ہے۔ فی الحال شہر میں ہر کسی کیلئے ماسک پہننا ضروری ہے۔ بائیک رائڈ کو منعقد کرنے والے ویسلی نونان سیسا کے مطابق فی الحال اس پروگرام میں حصہ لینے والے لوگوں کو ماسک لگانے کیلئے کہا گیا ہے لیکن اگر آنے والے ماہ میں کورونا سے جڑی پابندیوں میں اور ڈھیل دی جاتی ہے تو پھر بائیک رائیڈر کیلئے ماسک پہننا بھی ضروری نہیں ہوگا۔


کیا ہوتا ہے نیوڈ ہوکر بائیک رائیڈ میں خاص؟

بتادیں کہ فلاڈیفیا نیکڈ بائیک رائیڈ میں حصہ لینے کیلئے ہزاروں کی تعداد میں لوگ پہنچتے ہیں۔ سب سے پہلے لوگ پارک میں جمع ہوتے ہیں۔ اس کے بعد لوگ ایک دوسرے کے کپڑے اتارتے ہیں۔ اس میں خاتون اور مرد دونوں شامل ہوتے ہیں۔ پوری طرح برہنہ ہونے کے بعد لوگ بائیک پر سوار ہوتے ہیں۔ اس پروگرام کا مقصد پازیٹو باڈی امیج کو بڑھاواد ینا ہے۔ اس کے سائیکل ڈرائیور کی سکیورٹی کی وکالت کرما۔ ساتھ ہی فاسل فیول پر منحصر ہونے کی مخالفت کرنا۔

ان راستوں سے گزرتے ہیں
رائیڈر تقریبا 16 کلو میٹر تک بائیک چلاتے ہیں۔ رائیڈر بائک کو انڈی پینڈینس ہال، لبرٹی بیل اور فلا ڈیفیا میوزیم آف آرٹس اسٹیپس سے ہوتے ہوئے آگے بڑھتے ہیں۔ سڑک کنارے دونوں طرف ہزاروں کی تعداد میں لوگ کھڑے ہوتے ہیں۔
Published by: Sana Naeem
First published: Jun 11, 2021 12:57 PM IST