ہوم » نیوز » عالمی منظر

وزیر اعظم نریندر مودی نے پیش کی پنچ شیل کی نئی تشریح، چین صدر نے خیر مقدم کیا

ووہان : وزیراعظم نریندر مودی نے چین کے صدر شی جن پنگ کے سامنے 21ویں صدکی پنچ شیل کی نئی تشریح پیش کی۔

  • UNI
  • Last Updated: Apr 27, 2018 11:05 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
وزیر اعظم نریندر مودی نے پیش کی پنچ شیل کی نئی تشریح، چین صدر نے خیر مقدم کیا
ووہان : وزیراعظم نریندر مودی نے چین کے صدر شی جن پنگ کے سامنے 21ویں صدکی پنچ شیل کی نئی تشریح پیش کی۔


ووہان : وزیراعظم نریندر مودی نے چین کے صدر شی جن پنگ کے سامنے 21ویں صدکی پنچ شیل کی نئی تشریح پیش کی اور کہاکہ اس سے دنیا امن، استحکام اور خوشحالی آئے گی ۔ مسٹر جن پنگ نے اس کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ چین اس سے ترغیب لیکر ہندستان کے ساتھ تعاون کرنے کو تیار ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ مسٹر مودی نے مسٹر جن پنگ کے ساتھ وفد سطح کی میٹنگ میں کہا کہ اگر ہم یکساں وژن، مضبوط رشتے، مشترکہ عزم، بہتر بات چیت اور یکساں سوچ کے پانچ اصولوں والے پنچ شیل کے اس راستے پر چلیں تو اس سے عالمی امن، استحکام اور خوشحالی آئے گی۔ اس پر چینی صدر نے کہاکہ ان کا ملک مسٹر مودی کے ذریعہ تجویز کردہ


پنچ شیل کے ان اصولوں سے ترغیب لیکر ہندستان کے ساتھ تعاون اور کام کرنے کو تیار ہے۔

ہندستان اور چین کے درمیان تقریباََ 1988کے بعد پہلی بار آپسی رشتوں کی ایک نئی عبارت لکھنے جانے کی تاریخی کوشش کے طورپر دیکھی جارہی اس غیررسمی چوٹی میٹنگ کو ’دل سے دل تک‘ کہا جارہا ہے ۔ تیس برس پہلے اس وقت کے چینی لیڈر ڈینگ شیاواوپنگ سے غیررسمی چوٹی میٹنگ نے دونوں ممالک کے رشتوں میں نئے باب کی شروعات ہوئی تھی۔ میٹنگ میں وزیراعظم نے غیررسمی چوٹی میٹنگوں کی روایت شروع کرنے کی تجویز رکھی اور مسٹر جن پنگ کو آئندہ برس ہندستان آنے کی دعوت دی۔


رائع نے بتایا کہ دونوں لیڈروں کے مابین تنہائی میں ہوئی بات چیت کے بعد شام کو ہوئی میٹنگ میں دونوں طرف کے نمائندے بھی شامل ہوئے جن میں قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوبھال، اور چین کے وزیر خارجہ اور اسٹیٹ کاونسلر وانگ ای بھی موجود تھے ۔ نمائندہ وفد سطح کی بات چیت کا وقت نصف گھنٹہ طے تھا لیکن یہ دو گھنٹے تک چلی جس سے کل دونوں لیڈروں کی غیررسمی بات چیت کے بعد کچھ ٹھو نتائج نکلنے کی امیدوں کو تقویت ملی ہے۔ بعد میں چینی وزیراعظم عشائیہ کے بعد مسٹر مودی کو باہر تک چھوڑنے آئے۔


میٹنگ میں مسٹر مودی نے چینی صدر کے جذبہ کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ ہندستان کے لوگوں نے اس بات کو فخر سے دیکھا ہے کہ انہوں نے (مسٹر جن پنگ نے) راجدھانی بیجنگ کے باہر دو بار ان کا استقبال اور اعزاز کیا۔ یہ چینی صدر کے ہندستان کے تئیں پیار اور محبت کی علامت ہے۔ اور ہندستانی وزیراعظم کا استقبال اور اعزاز ہندستان کا اعزاز اور استقبال ہے جس کے لئے وہ مسٹر جن پنگ کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔


مسٹر مودی نے کہاکہ ہمارے پاس دنیا کی تقریباََ چالیس فیصد آبادی کے لئے کام کرنے کی ذمہ داری ہے اور اگر ایسا ممکن ہوا تو ہم ملکر دنیا کو تمام مسائل سے باہر نکالنے کا کام کرسکتے ہیں اور یہ ہمارے لئے ایک بڑا موقع ہے۔
غیررسمی چوٹی میٹنگ کے انعقاد کے خیال کی تعریف کرتے ہوئے مسٹر مودی نے کہاکہ ہندستان او ر چین کے مابین ایسی غیررسمی چوٹی میٹنگیں باضابطہ طورپر ہونی چاہئیں اور وہ 2019میں اگلی ایسی میٹنگ کے لئے چینی صدر کو ہندستان آنے کی دعوت دے رہے ہیں۔
یہاں سے سابقہ سلسلہ دیکھیں
First published: Apr 27, 2018 11:04 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading