உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    وزیر اعظم مودی نے افغانستان پر ایک اعلیٰ سطحی گروپ تشکیل دیا

    وزیر اعظم مودی نے افغانستان پر ایک اعلیٰ سطحی گروپ تشکیل دیا

    وزیر اعظم مودی نے افغانستان پر ایک اعلیٰ سطحی گروپ تشکیل دیا

    وزیر اعظم نریندر مودی نے ایک اعلی سطحی گروپ تشکیل دیا ہے جس میں وزیر خارجہ ڈاکٹر ایس جے شنکر، قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈووال اور اعلیٰ عہدیدار شامل ہیں تاکہ افغانستان کی بدلتی ہوئی صورتحال میں ہندوستان کی ترجیحات پر توجہ مرکوز کی جا سکے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی: وزیر اعظم نریندر مودی نے ایک اعلی سطحی گروپ تشکیل دیا ہے جس میں وزیر خارجہ ڈاکٹر ایس جے شنکر، قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈووال اور اعلیٰ عہدیدار شامل ہیں تاکہ افغانستان کی بدلتی ہوئی صورتحال میں ہندوستان کی ترجیحات پر توجہ مرکوز کی جا سکے۔
      افغانستان میں ہندوستان کی سرمایہ کاری اور کئی منصوبوں کے پیش نظر ہندوستان کے مفادات افغانستان سے گہرے طور پر جڑے ہوئے ہیں۔ لہٰذا یہ ایک بہت اہم قدم سمجھا جاتا ہے۔ ذرائع کے مطابق یہ گروپ طالبان کے افغانستان پر قبضے کے بعد بدلتی صورتحال کے پیش نظر تشکیل دیا گیا ہے۔ ہندوستان کی پالیسی اور ویژن کے مطابق بنائی گئی ہے۔ اس گروپ کا کام افغانستان میں روزمرہ کی پیش رفت اور ہندوستان پر اس کے اثرات پر نظر رکھنا ہے۔ یہ گروپ پچھلے کچھ دنوں سے باقاعدگی سے میٹنگ کررہا ہے۔

      ابھی افغانستان کے تناظر میں ہندوستان کی سب سے بڑی ترجیح وہاں سے لوگوں کی محفوظ واپسی اور اقلیتوں کا تحفظ ہے۔ اس کے ساتھ ایک حکمت عملی بنانا ہوگی کہ آنے والے وقتوں میں افغانستان کی سرزمین سے ہندوستان کے خلاف دہشت گردانہ کارروائیاں نہ کی جائیں۔

      دریں اثنا ، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے اگست میں ہندوستان کی صدارت کے اختتامی سیشن میں افغانستان سے لوگوں کی محفوظ واپسی اور مشترکہ طور پر دہشت گردی کا مقابلہ کرنے اور وہاں اقلیتوں کے تحفظ کے حوالے سے ایک قرارداد بھی منظور کی ہے۔

      حکومت نے افغانستان کی صورتحال پر اپوزیشن جماعتوں کو افغانستان کے مسئلے پر اعتماد میں لینے کی قواعد کے حصے کے طور پر بھی آگاہ کیا ہے۔ وزیر خارجہ ڈاکٹر ایس جے شنکر نے پچھلے ہفتہ پارلیمنٹ انیکسی میں تقریبا تمام اپوزیشن جماعتوں کے پارلیمانی لیڈروں کی میٹنگ میں تمام پہلوؤں سے اس کے بارے میں اطلاع دی تھی۔

      انہوں نے بتایا تھا کہ پھنسے ہوئے ہندوستانیوں کو واپس لانا ابھی حکومت کی سب سے بڑی ترجیح ہے۔ ہندوستان نے افغانستان سے پچھلے ہفتہ 6 پروازیں چلائی ہیں جن میں ہندوستانی شہریوں سمیت 550 سے زائد افراد واپس آئے ہیں۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: