உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    NATO Membership: فن لینڈ اور سوئیڈن کے نیٹو میں شامل ہونے کی بحث کے درمیان روسی صدر پوتن نے دیا بڑا بیان

    فن لینڈ اور سوئیڈن کو لے کر روسی صدر پوتن نے کہی یہ بڑی بات۔

    فن لینڈ اور سوئیڈن کو لے کر روسی صدر پوتن نے کہی یہ بڑی بات۔

    NATO Membership: بتادیں کہ حال ہی میں سویڈن کی حکمران سوشل ڈیموکریٹک پارٹی نے نیٹو میں جانے پر رضامندی ظاہر کی ہے۔ دونوں ممالک کی سرحدیں روس کے ساتھ ملتی ہیں، اس لیے ان کی نیٹو میں شمولیت روس کے خدشات میں اضافہ کر سکتی ہے۔

    • Share this:
      NATO Membership: فن لینڈ اور سویڈن کی نیٹو میں شمولیت کے چرچے کے درمیان روسی صدر ولادی میر پوتن کا بڑا بیان سامنے آیا ہے۔ صدر ولادیمیر پوتن نے کہا کہ اگر روس نیٹو کی رکنیت کے لیے درخواست دے گا تو اسے سویڈن یا فن لینڈ سے کوئی مسئلہ نہیں ہے۔ ساتھ ہی انہوں نے خبردار کیا کہ روس ان ممالک میں کسی بھی فوجی توسیع پر ردعمل ظاہر کرے گا۔

      پوتن ماسکو میں روس کی زیر قیادت اجتماعی سلامتی معاہدہ تنظیم کے سربراہی اجلاس سے خطاب کر رہے تھے، جس میں سابق سوویت یونین کے پانچ دیگر ممالک بھی شامل تھے۔ اس دوران فن لینڈ اور سویڈن پر گفتگو کرتے ہوئے پوتن نے واضح طور پر کہا کہ روس کو ان دونوں ممالک (فن لینڈ اور سویڈن) سے کوئی مسئلہ نہیں ہے۔ تو اس لحاظ سے ان ممالک کی توسیع سے روس کو کوئی براہ راست خطرہ نہیں ہے لیکن خطے میں فوجی انفراسٹرکچر کی توسیع یقیناً ہمارے ردعمل کو متحرک کرے گی۔

      روس پڑوسیوں کے نیٹو میں شامل ہونے کی کرتا رہا ہے مخالفت
      آپ کو بتادیں کہ حال ہی میں سویڈن کی حکمران سوشل ڈیموکریٹک پارٹی نے نیٹو میں جانے پر رضامندی ظاہر کی ہے۔ دونوں ممالک کی سرحدیں روس کے ساتھ ملتی ہیں، اس لیے ان کی نیٹو میں شمولیت روس کے خدشات میں اضافہ کر سکتی ہے۔ روس پڑوسیوں کی نیٹو میں شمولیت کا مخالف رہا ہے۔

      ایران کے دورے کو لے کر پوتن کی سربراہی کے لئے تہران تیار
      دوسری جانب تہران کو توقع ہے کہ روسی صدر ولادیمیر پوتن ایران کا دورہ کریں گے۔ یہ بات ماسکو میں تعینات ایرانی سفیر کاظم جلالی نے خبر رساں ایجنسی اسپوتنک کو انٹرویو دیتے ہوئے کہی۔ جلالی نے کہا کہ ’ہم مناسب وقت پر پوتن کا تہران میں استقبال کرنے کے لیے تیار ہیں۔‘ ہم تہران میں آستانہ فارمیٹ کے ممالک کے رہنماؤں کی سربراہی کانفرنس کے انعقاد میں بھی دلچسپی رکھتے ہیں۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Russia Ukraine War:اجوستال اسٹیل فیکٹری میں پھنسے زخمی فوجیوں کی حالت خراب

      یہ بھی پڑھیں:
      Russia attack Finland:ناٹو کی رکنیت کو لے کر کیوں متحرک ہے فن لینڈ؟کیا ہے ماہرین کی رائے؟

      سفارت کار نے کہا کہ ایرانی صدر ابراہیم رئیسی 19 جنوری کو دو روزہ دورے پر ماسکو پہنچے تھے، جس نے دونوں ممالک کے تعلقات میں ایک اہم موڑ کی نشاندہی کی ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: