உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Russia Ukraine War: یوکرین میں پھنسے ہندوستانی طلباء کو پریشانیوں کا سامنا، لڑکیوں کو بے رحمی سے پیٹا جا رہا ہے

    Russia Ukraine War: ادھریوکرین میں پھنسے ہندوستانی طلباء کو پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ ذرائع کے مطابق محفوظ مقامات کی جانب منتقل ہونے کے لیے مطلوبہ رہنمائی انھیں حاصل نہیں ہورہی ہیں۔ حتی کہ کچھ طلباء و طالبات کو سکیورٹی اہلکاروں کی زیادتی کا سامنا بھی کرنا پڑ رہا ہے۔

    Russia Ukraine War: ادھریوکرین میں پھنسے ہندوستانی طلباء کو پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ ذرائع کے مطابق محفوظ مقامات کی جانب منتقل ہونے کے لیے مطلوبہ رہنمائی انھیں حاصل نہیں ہورہی ہیں۔ حتی کہ کچھ طلباء و طالبات کو سکیورٹی اہلکاروں کی زیادتی کا سامنا بھی کرنا پڑ رہا ہے۔

    Russia Ukraine War: ادھریوکرین میں پھنسے ہندوستانی طلباء کو پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ ذرائع کے مطابق محفوظ مقامات کی جانب منتقل ہونے کے لیے مطلوبہ رہنمائی انھیں حاصل نہیں ہورہی ہیں۔ حتی کہ کچھ طلباء و طالبات کو سکیورٹی اہلکاروں کی زیادتی کا سامنا بھی کرنا پڑ رہا ہے۔

    • Share this:
      Russia Ukraine War: یوکرین پر روس کے حملے کا آج پانچواں دن ہے۔ روس اور یوکرین کی فوجیں مختلف محاذ پر آمنے سامنے ہیں۔ یوکرینی میڈیا کے مطابق کچھ گھنٹوں کی خاموشی کے بعد کیف اور خارکیف میں بمباری کا سلسلہ دوبارہ شروع ہوگیا ہے۔ دوسری طرف ساحلی شہر وردیانسک پر روسی فوج کا قبضہ ہوگیا ہے۔ چرنیف میں سائرن بج رہے ہیں۔ ہلاکتوں کی تعداد کے حوالے سے بھی دعوے اور اسے رد کیے جانے کا سلسلہ فریقین کی جانب سے جاری ہے۔ اس بیچ آج بیلاروس میں روس اور یوکرین کے بیچ ہونیوالے مذاکرے پر دنیا بھر کی نگاہیں ٹکی ہیں۔ بات چیت سے قبل یوکرینی صدر زیلنسکی کا کہنا ہے کہ آئندہ چوبیس گھنٹے انتہائی اہم ہیں۔

      ادھریوکرین میں پھنسے ہندوستانی طلباء کو پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ ذرائع کے مطابق محفوظ مقامات کی جانب منتقل ہونے کے لیے مطلوبہ رہنمائی انھیں حاصل نہیں ہورہی ہیں۔ حتی کہ کچھ طلباء و طالبات کو سکیورٹی اہلکاروں کی زیادتی کا سامنا بھی کرنا پڑ رہا ہے۔ وہیں یوکرین میں پھنسی ایک طالبہ نے  کا کہنا  کہ یہاں لڑکیوں کو بے رحمی سے پیٹا جا رہا ہے۔ ہم مسلسل ہندستانی سفارتخانے سے رابطہ کر رہے ہیں لیکن مایوسی ہاتھ لگ رہی ہے۔

      وہیں اس سب کے بیچ یوکرین سے ہندوستانی طلباء کی واپسی کا سلسلہ جاری ہے۔ یوکرین میں مقیم ہزاروں طلباء کو ہندوستان واپس لایا جارہا ہے۔۔ رومانیہ اور ہنگری کے ذریعہ یوکرین می پھنسے ہندوستانی طلباء کو ملک کو واپس لایا جارہا ہے۔ پانچویں فلائٹ کے ذریعہ دوسو انچاس طلباء کو ہندوستان لایا گیا ہے۔ ایک روز قبل تین طیاروں کے ذریعہ چھ سو اٹھیاسی طلباء کو واپس لایا گیاتھا ۔ حکومت نے اس بات کا یقین دلایا کہ یوکرین میں پھنسے ہندوستان کے تمام طلباء کو بحفاظت واپس لانے کے لئے ہرممکنہ کوشش کی جائے گی۔

      ایئر انڈیا (Air India) یوکرین میں پھنسے ہوئے سینکڑوں ہندوستانیوں کی وطن واپسی کے لیے پیش پیش ہے۔ اطلاع کے مطابق دو طرفہ انخلا کی پرواز کو چلانے کی لاگت 1.10 کروڑ روپے سے زیادہ ہوگی اور یہ رقم پروازوں کی مدت کے لحاظ سے بڑھ جائے گی۔ یہ ایئر لائن ایک وسیع باڈی والے بوئنگ 787 طیارے کے ساتھ خدمات انجام دے رہی ہے، جسے ڈریم لائنر کے نام سے جانا جاتا ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: