உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Russia Ukraine war: روس کی'عقل ٹکانے لگوانے' کیلئے امریکہ پہنچا UNSC، مانگا حملے کا حق

    Russia Ukraine war:  ایسے میں امریکہ اور دیگر مغربی ممالک نے اب اقوام متحدہ کا راستہ اختیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ان ممالک نے انتہائی سخت چیپٹر 7 کے تحت اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل (UNSC) میں ایک قرارداد پیش کیا ہے۔

    Russia Ukraine war: ایسے میں امریکہ اور دیگر مغربی ممالک نے اب اقوام متحدہ کا راستہ اختیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ان ممالک نے انتہائی سخت چیپٹر 7 کے تحت اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل (UNSC) میں ایک قرارداد پیش کیا ہے۔

    Russia Ukraine war: ایسے میں امریکہ اور دیگر مغربی ممالک نے اب اقوام متحدہ کا راستہ اختیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ان ممالک نے انتہائی سخت چیپٹر 7 کے تحت اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل (UNSC) میں ایک قرارداد پیش کیا ہے۔

    • Share this:
      کیف: روس نے عالمی برادری کی تمام اپیلوں کو نظرانداز کرتے ہوئے یوکرین پر حملہ کر دیا ہے۔ بہت سی کوششوں کے باوجود صدر ولادیمیر پوتن (Vladimir Putin) کے رویے میں کوئی تبدیلی نہیں آئی۔ ایسے میں امریکہ اور دیگر مغربی ممالک نے اب اقوام متحدہ کا راستہ اختیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ان ممالک نے انتہائی سخت چیپٹر 7 کے تحت اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل (UNSC) میں ایک قرارداد پیش کیا ہے۔ اس کے تحت نیٹو کو روسی جارحیت کا جواب دینے کے لیے طاقت کے استعمال کا حق دیا جانا ہے۔ اس پر آج ووٹنگ ہوگی۔ روس اس کے لیے تیار ہے۔ وہ سلامتی کونسل کا مستقل رکن ہونے کی وجہ سے اس قرارداد کو ویٹو کرے گا۔ لیکن امریکہ وغیرہ ممالک نے بھی اس سے نکلنے کا راستہ نکال لیا ہے۔ اس ووٹنگ کے دوران ہندوستان کا کیا موقف ہوگا اس پر سب کی نظریں ہیں۔

      امریکی ماہرین کے مطابق پوتن کو راضی کرنے کی تمام کوششیں ناکام ہونے کے بعد امریکہ، برطانیہ اور فرانس نے اقوام متحدہ میں چیپٹر 7 کے تحت تجویز پیش کی ہے۔ یہ چیپٹر 6 سے مختلف ہے جس میں معاملے کو پرامن طریقے سے حل کرنے کی بات کی گئی ہے۔ ہندوستان ٹائمز کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اگر یہ قرارداد چیپٹر 7 کے تحت منظور ہوتی ہے تو مغربی ممالک کو روس کے خلاف زبردستی کارروائی کا حق مل جائے گا۔ اس تجویز پر ووٹنگ جمعہ-سنیچر کی درمیانی شب ہندوستانی وقت کے مطابق تقریباً 1.30 بجے ہوگی۔ مغربی ممالک یو این ایس سی کے 15 رکن ممالک کے درمیان بھرپور لابنگ میں مصروف ہیں کہ کسی طرح یہ تجویز منظور ہو جائے۔ چین اس ووٹنگ کے دوران غیر حاضر رہ سکتا ہے۔ بھارت نے ابھی فیصلہ نہیں کیا کہ اس کا کیا موقف ہو گا۔

      امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن ہندستان اور چین دونوں پر زور دے رہے ہیں کہ وہ قرارداد کے حق میں ووٹ دے کر روس کو تنہا کرنے میں مدد کریں۔ خبر رساں ایجنسی یو این آئی کے مطابق ہندوستان کے خارجہ سکریٹری ہرش وردھن شرنگلا نے جمعرات کو کہا کہ کوئی بھی رخ اختیار کرنے سے پہلے ہندوستان دیکھے گا کہ اس تجویز میں کیا فائنل رہتا ہے۔ ہمیں بتایا گیا ہے کہ اس کے مسودے میں کچھ تبدیلیاں کی جانی ہیں۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: