உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Russia Ukraine War: تین دن میں دوسرے صحافی کی موت، فاکس نیوز کیلئے کرتا تھا کام

    Russia Ukraine War: تین دن میں دوسرے صحافی کی موت، فاکس نیوز کیلئے کرتا تھا کام  (Pierre Zakrzewski/Fox News via AP)

    Russia Ukraine War: تین دن میں دوسرے صحافی کی موت، فاکس نیوز کیلئے کرتا تھا کام (Pierre Zakrzewski/Fox News via AP)

    Russia Ukraine War: روس اور یوکرین کے درمیان جاری جنگ میں ایک اور صحافی کے مارے جانے کی خبر سامنے آئی ہے ۔ امریکی ٹی وی چینل فاکس نیوز کے ساتھ کام کرنے والے ایک ویڈیو جرنلسٹ کی کیف میں موت ہوگئی ہے ۔

    • Share this:
      کیف : 20 دن سے روس اور یوکرین کے درمیان جاری جنگ (Russia-Ukraine War) میں ایک اور صحافی کے مارے جانے کی خبر سامنے آئی ہے ۔ امریکی ٹی وی چینل فاکس نیوز کے ساتھ کام کرنے والے ایک ویڈیو جرنلسٹ کی کیف میں موت ہوگئی ہے ۔ یوکرین کی راجدھانی کیف کے باہری علاقے ہورینکا میں ہورہی گولیوں کی بوچھار میں فاکس نیوز کے صحافی پیئر زکرزیوسکی کی موت ہوگئی اور وہیں ان کے ساتھی بنجامن ہال اس حملے میں زخمی ہوگئے ۔ فی الحال بنجامن ہال کو یوکرین کے ایک اسپتال میں بھرتی کرایا گیا ہے ، جہاں ان کا علاج جاری ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : روس کے صدر پوتن کو 'سائیکوپیتھ' کہنے والی ماڈل کا قتل، سوٹ کیس میں ملی لاش!


      فاکس نیوز کی سی ای او سوزین اسکاٹ نے اس واقعہ کے سلسلہ میں ایک بیان جاری کیا ہے ۔ سوزین نے کہا کہ پیئرے ایک جنگ سے متاثرہ علاقوں کے فوٹوگرافر تھے ، جنہوں نے ہمارے ساتھ اپنی طویل مدت کار کے دوران عراق سے لے کر افغانستان اور شام تک فاکس نیوز کیلئے تقریبا ہر بین الاقوامی اسٹوری کو کوور کیا ۔ ایک صحافی کے طور پر ان کا جنون اور ان کی صلاحیت بے مثال تھی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : ولادیمیر پوتن نے توڑ دیا حسیناوں کا دل ، ایک فیصلے نے 'برباد کردی زندگی!'


      فاکس نیوز کے صحافی ٹرینگسٹ نے پیئرے کے ساتھ اپنی ایک تصویر شیئر کی ۔ انہوں نے لکھا : پتہ نہیں کیا کہوں، پیئرے جتنے اچھے تھے اتنے ہی اچھے تھے ، بے لوث، بہادر، جوشیلے ، ان کے ساتھ ایسا ہوا مجھے اس پر افسوس ہے ۔

      خیال رہے کہ اس سے پہلے یوکرین کے ارپن میں ایک برج کے نزدیک جانچ چوکی پر روکے جانے کے بعد ایک صحافی کو گولی مار دی گئی تھی ۔ یوکرین میں مارے گئے ایوارڈ یافتہ امریکی فلم ساز اور صحافی برینٹ ریناڈ ، ٹائمس اسٹوڈیو کیلئے کام کررہے تھے اور موت کے وقت عالمی پناہ گزیں بحران پر مرکوز ایک پروجیکٹ سے وابستہ تھے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: