உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Russia-Ukraine War: کندھے پر رائفل، ساتھ میں بچہ... جنگ کے درمیان پیدل نکلی یہ ماں

    Russia-Ukraine War: اس تصویر کو یوکرین کے سینٹر فار اسٹریٹجک کمیونیکیشن اینڈ انفارمیشن سیکورٹی نے ٹویٹر پر پوسٹ کی ہے ۔ اس میں ایک خاتون اپنے بچے کا ہاتھ پکڑے کندھے پر رائفل لٹکائے جیبرا کراسنگ کو پار کررہی ہے ۔ تصویر کے نیچے لکھا ہے کہ ہر ایک یوکرینی ماں 'ونڈر ویمن' کہلانے کے قابل ہے ۔

    Russia-Ukraine War: اس تصویر کو یوکرین کے سینٹر فار اسٹریٹجک کمیونیکیشن اینڈ انفارمیشن سیکورٹی نے ٹویٹر پر پوسٹ کی ہے ۔ اس میں ایک خاتون اپنے بچے کا ہاتھ پکڑے کندھے پر رائفل لٹکائے جیبرا کراسنگ کو پار کررہی ہے ۔ تصویر کے نیچے لکھا ہے کہ ہر ایک یوکرینی ماں 'ونڈر ویمن' کہلانے کے قابل ہے ۔

    Russia-Ukraine War: اس تصویر کو یوکرین کے سینٹر فار اسٹریٹجک کمیونیکیشن اینڈ انفارمیشن سیکورٹی نے ٹویٹر پر پوسٹ کی ہے ۔ اس میں ایک خاتون اپنے بچے کا ہاتھ پکڑے کندھے پر رائفل لٹکائے جیبرا کراسنگ کو پار کررہی ہے ۔ تصویر کے نیچے لکھا ہے کہ ہر ایک یوکرینی ماں 'ونڈر ویمن' کہلانے کے قابل ہے ۔

    • Share this:
      Russia-Ukraine War: یوکرین اور روس کے درمیان جاری جنگ اس دور میں لڑی جارہی ہے جب سوشل میڈیا سب سے بڑا اور تیز وسیلہ ہے ۔ اب جنگ سے وابستہ جانکاریاں اور تمام دوسرے پہلو ہمارے سامنے پر آرہے ہیں ۔ ایسی ہی ایک تصویر وائرل ہورہی ہے ، جس میں ایک ماں اپنے کندھے پر رائفل لٹکا کر اپنے چھوٹے بچے کا ہاتھ تھامے جنگ کے درمیان سڑک پر چل رہی ہے ۔

      اس تصویر کو یوکرین کے سینٹر فار اسٹریٹجک کمیونیکیشن اینڈ انفارمیشن سیکورٹی نے ٹویٹر پر پوسٹ کی ہے ۔ اس میں ایک خاتون اپنے بچے کا ہاتھ پکڑے کندھے پر رائفل لٹکائے جیبرا کراسنگ کو پار کررہی ہے ۔ تصویر کے نیچے لکھا ہے کہ ہر ایک یوکرینی ماں 'ونڈر ویمن' کہلانے کے قابل ہے ۔


      تصویر سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے ۔ لوگ خاتون کی جرات کو سلام کررہے ہیں ۔ تصویر کو سیکڑوں لائیکس مل چکے ہیں ۔ تصویر پر کمنٹ کرتے ہوئے ایک یوزر نے لکھا کہ یوکرین کی سبھی ماووں کو اسی طرح دل سے مضبوط رہنا ہے ۔ آپ جتنا سوچتی ہیں اس سے زیادہ طاقتور ہیں ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : یوکرین سے جان بچاکر 1100 کلومیٹر دور سلوواکیہ بارڈر تنہا پہنچا 11 سال کا بچہ، ہاتھ پر لکھے نمبر نے رشتہ داروں سے ملوایا


      ایک دیگر یوزر نے لکھا کہ اس تصویر نے میری آنکھیں نم کردی ہے ۔ ایک یوزر لکھتے ہے کہ میری اہلیہ اور بیٹی کے ساتھ ایسا ہونا اور مستقبل میں ان پر اس کا کیا اثر ہوگا ، یہ سوچ پانا بھی مشکل ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : چین کی میڈیا کا دعوی، روس نے بنائی اپنے 31 دشمن ممالک کی فہرست، جانئے کون کون ہے شامل


      خیال رہے کہ اس سے پہلے بھی ایسی ہی ایک جھنجھوڑ دینے والی تصویر وائرل ہوئی تھی ، جس میں ایک چھوٹا بچہ اپنے والدین کی یوکرینی فوج کی وردی میں آرام سے سو رہا ہے ۔ اس تصویر نے نیچھے لکھا ہوا تھا : الوداع میرے بچے ، امید کرتا ہوں کہ کبھی پھر تم سے ملوں گا ۔

      خیال رہے کہ روس نے منگل کو کیف ، چیرنیہائیو ، سومی ، خارکیف اور ماریوپول شہروں میں لوگوں کو نکلنے کیلئے صبح دس بجے ( ماسکو کے وقت کے مطابق) سیز فائر کا اعلان کیا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: