உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سعودی عرب کا حوثی باغیوں کے میزائل کوتباہ کرنے کا دعوی

    سعودی عرب نے حوثی باغیوں کے میزائل کو ناکام بنانے کا دعویٰ کیا ہے۔

    سعودی عرب نے حوثی باغیوں کے میزائل کو ناکام بنانے کا دعویٰ کیا ہے۔

    ترجمان کے حوالہ سے بتایا گیا ہے کہ میزائل رہائشی علاقوں کی طرف جا رہا تھا، لیکن اسے جازان کے پاس ہی تباہ کر دیا گیا۔

    • Reuters
    • Last Updated :
    • Share this:
      قاہرہ: یمن میں سعودی عرب کی قیادت والی اتحادی افواج کے خلاف لڑ رہے حوثی جنگجوؤں نے ہفتہ کو جنوبی سعودی عرب کے صنعتی جازان کو نشانہ بنا کر میزائل حملہ کیا، لیکن سعودی کی فوج نے میزائل کو ہوا میں ہی تباہ کر کےحملے کو ناکام بنانے کا دعوی کیا ہے۔

      حوثی کے المسيراه ٹی وی کے مطابق صنعتی شہر جازان کو نشانہ بنا کرایک بدر میزائل داغا گیا۔ سعودی عرب کی سرکاری خبر رساں ایجنسی نے حوثی جنگجوؤں کے خلاف جدوجہد کر رہی اتحادی افواج کے ترجمان کے حوالہ سے بتایا کہ میزائل رہائشی علاقوں کی طرف جا رہا تھا لیکن اسے جازان کے پاس ہی تباہ کر دیا گیا۔

      سعودی فوج کے کرنل ترکی المالکی نے کہا کہ میزائل کو تباہ کئے جانے کے وقت جان و مال کے نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے. ایران حمایت یافتہ حوثی جنگجو باقاعدگی سے سعودی-یمن سرحد پر واقع جازان صوبے میں میزائل حملے کرنے کا دعوی کرتے رہے ہیں۔

      یہ بھی پڑھیں:    سعودی عرب نے حوثی باغیوں کے دو بیلسٹک میزائل کو مار گرایا

      حوثی جنگجوؤں کا کہنا ہے کہ سعودی عرب پر ان کے میزائل حملے مغربی ممالک کی حمایت یافتہ اتحادی افواج کے یمن پر ہوائی حملوں کے انتقام میں ہیں۔ اتحادی افواج کا مقصد یمن کے صدر عبد ربہ منصور ہادی کی حکمرانی کو دوبارہ بحال کرنا ہے۔ غور طلب ہے کہ حوثی جنگجوؤں نے 2015 میں منصورہادی کو دارالحکومت ثنا سے بے دخل کر دیا تھا۔

      یہ بھی پڑھیں:    سعودی اتحادی افواج کا حدیدہ ہوائی اڈہ کے بڑے حصہ پر قبضہ

      یہ بھی پڑھیں:     حوثی باغیوں کے خلاف زمینی کارروائی سے فریقین کا نقصان ہو گا: سعودی عرب

       

       
      First published: