உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Hajj: سعودی حکومت کا بڑا فیصلہ: عازمین کو مناسک کی ادائیگی کے دوران احتیاطی تدابیر پر عمل کرنا ہوگا ضروری: یہاں جانئے گائیڈ لایئنس

    Youtube Video

    Hajj 2022: سعودی وزارت حج کے اعلان کے مطابق اس سال پینسٹھ سال سے کم عمر عازمین حج کی سعادت حاصل کرسکیں گے۔سفر حج کے لحے کورونا کا ٹیکہ لازمی ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ غیر ملکی عازمین کو روانگی سے 72 گھنٹے پہلے کی پی سی آر رپورٹ RTPCR TES جمع کرانی ہوگی ۔

    • Share this:
      سعودی عرب Saudi Arabia نے اس سال عازمین حج کی تعداد دس لاکھ تک بڑھانے اعلان کیا ہے۔ عالمی وبا کورونا Covid-19 pandemic کے سبب پچھلے دو برسوں میں عازمین کی تعداد محدود کردی گئی تھی۔ سعودی وزارت حج Hajj 2022 کے اعلان کے مطابق اس سال 65 سال سے کم عمر عازمین حج کی سعادت حاصل کرسکیں گے۔ سفر حج کے لئے کورونا کا ٹیکہ لازمی ہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ غیر ملکی عازمین کو روانگی سے بہتر گھنٹے پہلے کی RTPCR رپورٹ جمع کرانی ہوگی۔ سعودی وزارت حج کے مطابق عازمین کو مناسک کی ادائیگی کے دوران احتیاطی تدابیر پر عمل کرنا ہوگا۔ خیال رہے کہ گزشتہ برس کورونا کے بڑھتے معاملوں کے سبب ساٹھ ہزار سعودی عرب کے شہریوں اور رہائش پذیر افراد کو حج ادا کرنے کی اجازت دی گئی تھی۔

      کورونا وائرس عالمی وبا کی وجہ سے دو سال تک محدود حج Hajj کے بعد سعودی عرب نے اس سال عازمین حج کی تعداد 10لاکھ تک بڑھانے کا اعلان کیا ہے۔ گزشتہ دو برسوں کے دوران صرف سعودی عرب میں رہنے والے چند ہزار عازمین کو ہی فریضہ حج ادا کرنے کی اجازت دی گئی تھی۔

      رواں سال دس لاکھ زائرین حج بیت اللہ کی سعادت حاصل کرسکیں گے۔ سعودی عرب ایک ملین زائرین کوحج بیت اللہ کی اجازت دےگا۔ اس میں مقامی اورغیرملکی عازمین شامل ہیں۔ واضح ہو کہ دو سال کےعرصہ کے بعدحج زائرین کی تعدادمیں اضافہ کافیصلہ لیاگیا ہے جبکہ اس سے پہلے کوروناکی وجہ سےغیرمقامی افرادکوحج کی اجازت نہیں دی گئی تھی۔ گزشتہ دوبرسوں سےغیرملکی عازمین کوحج کی اجازت نہیں دی گئی تھی۔


      عازمین حج کی تعداد میں اضافے کا اعلان کرتے ہوئے سعودی عرب Saudi Arabia کی وزارت حج و عمرہ نے گائیڈ لائنس کا بھی اعلان کیا ہے۔ وزارت کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ مسلمانوں کے مقدس ترین شہر مکہ میں صرف ایسے عازمین حج کو آنے کی اجازت دی جائے گی جنہوں نے کووڈ ۱۹ vaccine کی دونوں خوراک لے لی ہیں۔ اس کے علاوہ ان کی عمر 65 برس سے کم ہونی چاہئے۔

      عازمین حج کے لیے یہ ہیں شرائط

      بیان میں کہا گیا ہے کہ بیرون ملک سے آنے والے تمام عازمین حج کے لیے سعودی عرب روانہ ہونے سے پہلے زیادہ سے زیادہ 72 گھنٹے پہلے کا آر ٹی پی سی آر RTPCR نگیٹو ٹیسٹ رپورٹ  جمع کرنا لازمی ہوگی۔ اس کے ساتھ ہی انہیں مکہ اور مدینہ میں قیام کے دوران کورونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے کیے گئے احتیاطی اقدامات پر بھی عمل کرنا ضروری ہوگا۔

      Ramazan 2022: کھجور قدرت کا ایک انمول تحفہ، افطار میں اچھا ذائقہ اور فوائد حاصل کرنے کیلئے بنائے یہ ڈش


      سعودی وزارت حج و عمرہ کی طرف سے ہفتے کے روز جاری بیان میں کہا گیا ہے،"خادم الحرمین شریفین کے لیے جہاں اس بات کو یقینی بنانا ضروری ہے کہ دنیا بھر کے مسلمان ایک محفوظ او روحانی ماحول میں فریضہ حج ادا کرسکیں اور مسجد نبوی کی زیارت کرسکیں۔ وہیں عازمین حج اور مسجد نبوی کے زائرین کی صحت وسلامتی اور سکیورٹی کو یقینی بنانا بھی ان کے لیے انتہائی اہمیت کی حامل ہے۔"

      Published by:Sana Naeem
      First published: