ہوم » نیوز » عالمی منظر

مسجد اقصی میں یہودی آباد کاروں کا دھاوا، مقدس مقام کی بے حرمتی کا سلسلہ جاری

غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق مرکز اطلاعات فلسطین نے فلسطینی محکمہ اوقاف کے حکام کے حوالے سے بتایا ہے کہ اتوار کو 200 یہودی آباد کار مراکشی دروازے کے راستے قبلہ اول میں داخل ہوئے اور حرم قدسی کی بے حرمتی کا ارتکاب کیا۔

  • UNI
  • Last Updated: Oct 02, 2018 01:14 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
مسجد اقصی میں یہودی آباد کاروں کا دھاوا، مقدس مقام کی بے حرمتی کا سلسلہ جاری
مسجد اقصیٰ: فائل فوٹو۔

فلسطین کے مقبوضہ بیت المقدس میں مسجد اقصی میں یہودی آباد کاروں کے دھاوے اور مقدس مقام کی مجرمانہ بے حرمتی کا سلسلہ جاری ہے۔ یہودی رکن کنیسٹ شولی ملوم کی زیرقیادت 200 یہودی آباد کار اور اسرائیلی فوجی پولیس کی فول پروف سکیورٹی میں مسجد اقصیٰ میں داخل ہوئے اور قبلہ اول میں گھس کرنام نہاد مذہبی رسومات کی ادائیگی کی آڑ میں مقدس مقام کی بے حرمتی کی۔


غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق مرکز اطلاعات فلسطین نے فلسطینی محکمہ اوقاف کے حکام کے حوالے سے بتایا ہے کہ اتوار کو 200 یہودی آباد کار مراکشی دروازے کے راستے قبلہ اول میں داخل ہوئے اور حرم قدسی کی بے حرمتی کا ارتکاب کیا۔ دن کے دوسرے حصے میں مزید درجنوں یہودی شرپسند قبلہ اول میں داخل ہوئے۔ اشتعال انگیز حرکات کا ارتکاب کیا اور مقدس مقام کی بے حرمتی کی۔اطلاعات کے مطابق مسجد اقصیٰ کے دروازوں کے باہر تعینات کی گئی اسرائیلی پولیس نے فلسطینی نمازیوں کے ساتھ بدسلوکی کی اور ان کی شناخت پریڈ کے ساتھ انہیں قبلہ اول میں عبادت کے لیے داخل ہونے سے روکنے کی کوشش کرتے رہے۔


اسرائیلی فوج کی جانب سے روکنے پرفلسطینی مشتعل ہوگئے اورانہوں نے صہیونی فوج اور پولیس کی غنڈہ گردی کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔

First published: Oct 02, 2018 01:14 PM IST