உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان: پشاور میں 2 سکھوں کا گولی مار کر قتل، SGPC نےکہا- یہ بزدلانہ حرکت

    پاکستان: پشاور میں 2 سکھوں کا گولی مار کر قتل

    پاکستان: پشاور میں 2 سکھوں کا گولی مار کر قتل

    Sikh Men Killed In Peshawar: پاکستان کے شمال مغربی شہر پشاور میں نامعلوم حملہ آوروں نے سکھ برادری کے دو لوگوں کا گولی مار کر قتل کردیا۔ مارے گئے لوگوں کی پہچان سلجیت سنگھ (42) اور رنجیت سنگھ (38) کے طور پر ہوئی ہے۔ 

    • Share this:
      پشاور: پاکستان کے شمال مغربی شہر پشاور میں نامعلوم حملہ آوروں نے سکھ برادری کے دو لوگوں کا گولی مار کر قتل کردیا۔ مارے گئے لوگوں کی پہچان سلجیت سنگھ (42) اور رنجیت سنگھ (38) کے طور پر ہوئی ہے۔ مقامی پولیس نے کہا کہ یہ دونوں دوکاندار تھے، جو سربند علاقے کے باٹا تال بازار میں مسالہ بیچتے تھے۔

      پشاور میں گزشتہ 8 ماہ میں سکھ برادری پر اس طرح کا یہ دوسرا حملہ ہے۔ گزشتہ سال ستمبر میں پشاور میں ایک مشہور سکھ ’حکیم‘ کا نامعلوم بدمعاشوں نے گولی مارکر قتل کردیا تھا۔ پشاور میں تقریباً 15,000 سکھ رہتے ہیں۔ بیشتر صوبائی راجدھانی کے پڑوس جوگن شاہ میں ہیں۔ پشاور میں سکھ برادری کے بیشتر ممبران تجارت سے جڑے ہیں، جبکہ کچھ دوا خانے بھی چلاتے ہیں۔

      شرومنی گرودوارہ منیجنگ کمیٹی نے اس قتل کی مذمت کی ہے۔ ایس جی پی سی کے صدر ایڈوکیٹ ایس ہرجندر سنگھ نے کہا کہ اقلیتوں کا اس طرح کا قتل پوری دنیا اور خاص طور پر سکھوں کے لئے بے حد تشویش کا موضوع ہے۔ انہوں نے کہا، ’ہم پشاور، خیبر پختونخوا، پاکستان میں دو سکھوں کے کائرانہ قتل کی مذمت کرتے ہیں۔ دونوں ممالک کی سرکاروں کو پاکستان میں رہنے والے اقلیتی سکھوں کی زندگی اور جائیداد کی سیکورٹی کو یقینی بنایا جانا چاہئے‘۔

      وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری نے پشاور میں سکھ شہریوں کے قتل کی مذمت اور تشویش ظاہر کی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ سکھ شہریوں کے قتل میں شامل ملزمین کو فوراً گرفتار کیا جانا چاہئے۔ ساتھ ہی انہوں نے کہا کہ کسی کو بھی مذہبی ہم آہنگی اور فرقہ وارانہ ماحول خراب کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

       
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: