اپنا ضلع منتخب کریں۔

     مالی بحران کا شکار پاکستان کیلئے بری خبر، خالی ہو رہا ہے خزانہ، بچا ہے صرف اتنا پیسہ

    بتایا جا رہا ہے کہ خزانے میں اب صرف چند ہفتوں کی رقم رہ گئی ہے۔ سینٹرل بینک نے ایک بیان میں کہا ہے کہ زرمبادلہ کی کمی کے باعث اب قرضہ چکانابہت مشکل ہو جائے گا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • inter, IndiaPakistanPakistanPakistanPakistanPakistan
    • Share this:
      نئی دہلی. مالیاتی بحران کا شکار پاکستان کی مشکلات مزید بڑھ سکتی ہیں۔ پاکستان کے مالیاتی بحران کا راستہ آسان نظر نہیں آ رہا ہے۔ ایک رپورٹ کے مطابق پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر گزشتہ 3 سال کی کم ترین سطح پر پہنچ گیا ہے۔ پاکستان عالمی پلیٹ فارم پر مدد کی التجا کر رہا ہے۔ سینٹرل بینک کے ذریعے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر 303 ملین ڈالر سے کم ہو کر 7.50 ارب ڈالر رہ گئے ہیں۔ یہ جولائی 2019 کے بعد سب سے کم سطح پر ہے۔

      جیو نیوز کی رپورٹ کے مطابق 30 ستمبر کو پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر 7.89 ارب ڈالر تھا۔ صرف ایک ہفتے میں یہ گھٹ کر 7.59 بلین ڈالر پر آ گیا ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ خزانے میں اب صرف چند ہفتوں کی رقم رہ گئی ہے۔ سینٹرل بینک نے ایک بیان میں کہا ہے کہ زرمبادلہ کی کمی کے باعث اب قرضہ چکانابہت مشکل ہو جائے گا۔


      پاکستان میں سیلاب کے بعد اب ملیریا۔ڈینگو کا قہر، مریضوص سے اسپتال بھرے، حالات بدتر

      مشکل وقت میں پاکستان کو پھر آئی ہندستان کی یاد، مانگی 71 لاکھ مچھردانی: جانئے کیوں

      پاکستان نے بین الاقوامی سطح پر مانگی مدد
      مالیاتی بحران کا شکار پاکستان کو اب ڈیفالٹر قرار دیے جانے کا ڈر ستا ہے۔ اس سے بچنے کے لیے اس نے بین الاقوامی سطح پر مالی مدد بھی مانگی ہے لیکن اس سے پہلے پاکستان میں سیلاب نے کافی تباہی مچائی ہے۔ سیلاب کی وجہ سے پاکستان کی معیشت بری طرح متاثر ہوگئی ہے۔ اقوام متحدہ نے پاکستان کی مدد کے لیے دوسرے ممالک سے فنڈز جاری کرنے کی بھی اپیل کی ہے۔

      دنیا کے وہ 10 پراسرار لوگ جن کی آج تک نہیں ہوسکی کوئی پہچان، تصویریںکیمروں میں ہوگئیں قید

      مدرا بھنڈار میں کمی ہونے کے سبب پاکستان کا معاشی نظام درہم برہم ہو گیا ہے۔ درآمدات میں اضافے کی وجہ سے مدرا بھنڈار  بھی تیزی سے گھٹ رہا ہے۔ پی ٹی آئیلیڈر وزیر اسد عمر نے اپنی ایک ٹویٹ میں کہا ہے کہ اس ہفتے اسٹیٹ بینک کے ریزرو میں 300 ملین ڈالر کی مزید کمی آئی ہے۔ ہم نے آدھے سے زیادہ اسٹاک کھو دیا ہے جو تحریک عدم اعتماد دائر کرنے کے وقت موجود تھا۔ بحران گہرا ہوتا جا رہا ہے اور حکومت اپنے کرپشن کیسز کو ختم کرنے میں مصروف ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: