உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Hajj 2022: آج شیخ محمد العیسیٰ کا میدان عرفات میں خطبہ حج، کیا ہوگی اہم بات؟

    شیخ محمد العیسیٰ (تصویر سعودی گزٹ)

    شیخ محمد العیسیٰ (تصویر سعودی گزٹ)

    آج یعنی نویں ذی الحجہ بروز جمعہ کو عرفات کے دن مسجد نمرہ (Namirah Mosque) میں شیخ محمد العیسیٰ خطبہ حج دیں گے اور نماز جمعہ کی امامت کریں گے۔

    • Share this:
      جدہ: نامور سعودی عالم دین شیخ محمد العیسیٰ (Sheikh Muhammad Al-Issa) میدان عرفات میں حج 2022 (1443 ہجری) کے دوران خطبہ دیں گے۔ شیخ محمد العیسیٰ، سعودی عرب میں سینئر اسکالرز کی کونسل کے رکن اور مسلم ورلڈ لیگ (MWL) کے سیکرٹری جنرل ہیں۔

      آج یعنی نویں ذی الحجہ بروز جمعہ کو عرفات کے دن مسجد نمرہ (Namirah Mosque) میں شیخ محمد العیسیٰ خطبہ حج دیں گے اور نماز کی امامت کریں گے۔ مکہ مکرمہ میں مذہبی امور کی وزارت نے اپنے آفیشل ٹویٹر اکاؤنٹ پر ایک بیان میں کہا کہ اعلیٰ حکام نے اس سلسلے میں منظوری جاری کر دی ہے۔

      یوم عرفات حج کے مناسک کا نہایت ہی اہم دن ہے۔ مناسک حج کا آغاز جمعرات 7 جولائی سے ہی ہوچکا ہے۔ یہاں دنیا بھر کے حجاج کرام ظہر اور عصر کی نمازیں ایک ساتھ ادا کرتے ہیں۔

      شیخ محمد العیسیٰ پر تنازعہ کیوں؟

      سعودی عرب میں ڈاکٹر العیسیٰ کو حکومت کے حامی اور نمائندہ مذہبی اسکالرز میں سے شمار کیا جاتا ہے۔ خطبہ عرفات کے لیے شیخ محمد العیسیٰ کے نام کے اعلان کے ساتھ ہی مسلم ممالک اور دینی حلقوں میں کئی طرح کی آرا کا اظہار کیا جارہا ہے۔

      ڈاکٹر العیسیٰ سعودی عرب کے سابق وزیر انصاف ہیں، غیر اسلامی ممالک میں مسلم کمیونٹیز کو ان ممالک کے آئین، قوانین اور ثقافت کا احترام کرنے کی دعوت دینے کے لیے مشہور ہیں۔ علمی سطح پر ڈاکٹر العیسیٰ نے اسلامی شریعت، آئینی اور انتظامی قوانین میں مہارت حاصل کی ہے۔ انہوں نے متعدد کتابیں تصنیف کی ہیں۔ شریعت، قانون اور بہت سے فکری مسائل پر مضامین شائع کیے ہیں۔

      سعودی یونیورسٹیوں میں شریعت اور قانون کی تدریس:

      انہوں نے سعودی یونیورسٹیوں میں شریعت اور قانون کی تدریس بھی کی ہے، کئی ڈاکٹریٹ اور ماسٹرز کے مقالوں کی نگرانی اور ان پر تبادلہ خیال کیا اور دنیا بھر کے بین الاقوامی فکری اداروں اور یونیورسٹیوں میں لیکچر دئیے۔

      یہ بھی پڑھیں: Hajj 2022: آب زم زم کی تقسیم کیلئےجدید ترین ٹکنالوجی کااستعمال، ایک دن میں 2 لاکھ سےزائدبوتلیں تیار

      حج کے دوران احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد کیا جارہا ہے۔ اس طرح سعودی عرب کی حکومت نے اس سال صرف 10 لاکھ عازمین حج کو ہی حج کرنے کی اجازت دی ہے۔

      یہ بھی پڑھیں: Hajj 2022: خیموں کے سب سے بڑے شہر منیٰ میں عازمین حج کا قیام، جمعہ کو مناسک حج کا دوسرا دن

      شیخ محمد العیسیٰ حکومتی پالیسوں کے حامی رہے ہیں اور انھیں مختلف مذاہب کے ماننے والوں کے درمیان افہام و تفہیم اور بھائی چارہ کے لیے پہل کرنے والے کے طور پر دیکھا جاتا ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: