உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    افغاستان: ہرات میں Taliban کے قافلے پر حملہ، 20 سے زیادہ دہشت گرد زخمی

    طلوع نیوز TOLOnews کے مطابق نامعلوم افراد نے ایک منی بس پر حملہ کیا جو طالبان 207 الفاروق کور کے ارکان کو ہرات کے شہر کے مرکز میں لے جا رہی تھی۔ حملے میں زخمیوں کی تعداد نہیں بتائی گئی۔

    طلوع نیوز TOLOnews کے مطابق نامعلوم افراد نے ایک منی بس پر حملہ کیا جو طالبان 207 الفاروق کور کے ارکان کو ہرات کے شہر کے مرکز میں لے جا رہی تھی۔ حملے میں زخمیوں کی تعداد نہیں بتائی گئی۔

    طلوع نیوز TOLOnews کے مطابق نامعلوم افراد نے ایک منی بس پر حملہ کیا جو طالبان 207 الفاروق کور کے ارکان کو ہرات کے شہر کے مرکز میں لے جا رہی تھی۔ حملے میں زخمیوں کی تعداد نہیں بتائی گئی۔

    • Share this:
      کابل: افغانستان کے صوبہ ہیرات میں طالبان کے ارکان کو لے جارہے ایک قافلے پر حملہ کیا گیا۔ مقامی میڈیا کے مطابق پیر کی صبح ہونے والے دھماکے میں طالبان کے 20 سے زائد ارکان کے زخمی ہونے کی اطلاع ہے۔ طالبان کی جانب سے ابھی تک کسی ہلاکت کی تصدیق نہیں کی گئی ہے۔

      طلوع نیوز TOLOnews کے مطابق نامعلوم افراد نے ایک منی بس پر حملہ کیا جو طالبان 207 الفاروق کور کے ارکان کو ہرات کے شہر کے مرکز میں لے جا رہی تھی۔ حملے میں زخمیوں کی تعداد نہیں بتائی گئی۔
      طلوع نیوز نے پشتو زبان میں ٹویٹ کیا: "نامعلوم مسلح افراد نے مغربی صوبہ ہیرات میں الفاروق کور کے قافلے پر حملہ کیا۔ ہرات Herat میں مقامی حکام نے واقعے کی تصدیق کی ہے، لیکن انہوں نے سکیورٹی فورسز کو ہلاکتوں کے بارے میں مطلع نہیں کیا۔"






      ہرات پولیس کے ترجمان محمد شاہ رسول نے کہا کہ حملہ آوروں میں سے ایک ہلاک اور عام شہریوں سمیت کئی دیگر زخمی ہوئے۔ میڈیا آؤٹ لیٹ نے ایک ٹویٹ تھریڈ میں کہا، "ہرات پولیس چیف کے ترجمان محمد شاہ رسول نے کہا کہ یہ واقعہ پیر کی صبح ہرات کے چوتھے پولیس ڈسٹرکٹ میں پیش آیا۔ نامعلوم مسلح افراد نے ایک گاڑی پر حملہ کیا۔"

      Maharashtra Politics: مہاراشٹر کی شندے حکومت نے اسمبلی میں ثابت کی اکثریت

      ٹویٹ میں مزید کہا گیا کہ ’’حملے میں ایک حملہ آور مارا گیا، تاہم عینی شاہدین نے بتایا کہ دو طالبان مارے گئے۔ 20 سے زائد طالبان اور ایک شہری زخمی ہوئے۔ زخمیوں کو ہرات کے مرکزی اسپتال لے جایا گیا۔"
      Published by:Sana Naeem
      First published: