ہوم » نیوز » عالمی منظر

صومالیہ میں بڑا دہشت گردانہ حملہ، 90 افراد ہلاک، بڑی تعداد میں لوگ زخمی

صومالیہ کی راجدھانی میں ہوئے بم دھماکہ میں ہلاک ہونے والے بیشتر یونیورسٹی کے طلباء ہیں۔ اس دہشت گردانہ حملےکی ذمہ داری بھی الشباب تنظیم نےلی ہے۔ 2006 سے یہ تنظیم مسلسل صومالیہ میں دہشت گرانہ حملےکو انجام دے رہی ہے۔

  • Share this:
صومالیہ میں بڑا دہشت گردانہ حملہ، 90 افراد ہلاک، بڑی تعداد میں لوگ زخمی
صومالیہ میں بڑا دہشت گردانہ حملہ ہوا، جس میں بڑی تعداد میں ہلاکتیں ہوئی ہیں۔ تصویر: اے پی

موغادیشو: صومالیہ کی راجدھانی موغادیشومیں ہفتہ کےروز سیکورٹی چیک پوسٹ کے نزدیک خود کش کاربم دھماکہ میں کم از کم 90 لوگوں کی موت جبکہ 70 دیگرزخمی ہو گئے۔ نجی ایمبولینس سروس امین کےڈائریکٹرعبدالقدیرعبدالرحمٰن حاجی نےحملےمیں مارے گئےلوگوں کی تصدیق کی اورکہا کہ تمام زخمیوں کی حالت سنگین ہےاورانہیں موغادیشوکے اسپتالوں میں داخل کرایا گیا ہے۔ صومالیہ کی راجدھانی موغادیشوکےایک مصروف علاقے میں یہ دھماکہ ہوا۔ ہلاک ہونے والوں میں بیشتر یونیورسٹی کے طلباء ہیں۔ مقامی وقت کے مطابق یہ دھماکہ صبح 8 بجے ہوا۔ اس دہشت گردانہ حملے کی ذمہ داری بھی الشباب تنظیم نے لی ہے۔ 2006 سے یہ تنظیم مسلسل صومالیہ میں دہشت گرانہ حملے کوانجام دے رہی ہے۔


سرکاری ترجمان اسماعیل مختارعمرنےکہا کہ دارالحکومت موغادیشو کےباہر ایک چیک پوسٹ کے قریب جب افسران سڑک سے گزرنے والی گاڑیوں کی تلاشی لے رہے تھے، تبھی اچانک ایک گاڑی میں دھماکہ ہوا۔ حکومت اور پولیس نےاس دھماکے میں 30 افراد کےہلاک اور 50 سےزائد افراد کے زخمی ہونے کی اطلاع دی ہے۔ ایک پولیس افسر نےشناخت ظاہر نہ کرنے کی درخواست کرتے ہوئے بتایا کہ ہمیں اب تک 30 لوگوں کے ہلاک اور 50 سے زائد افراد کے زخمی ہونے کی اطلاع ملی ہے۔


صومالیہ کی راجدھانی موغادیشو میں کار بم دھماکہ میں بڑی تعداد میں ہلاکتیں ہوئی ہیں۔


موغادیشو کےمیئرعمرمحمد کےمطابق زیادہ زخمیوں میں یونیورسٹی کےطالب علم شامل ہیں۔ ایک عینی شاہد نےکہا، "میں ایک رکشےمیں تھا اورمیں نے زبردست دھماکےکی آواز سنی۔ میں نے دھواں اٹھتا ہوا دیکھا۔ ہمارے سامنے رکشہ میں سوارتینوں لوگ دھماکے میں مارے گئے۔ لوگ گھبرا کربھاگ رہےتھے۔" ابھی تک کسی بھی دہشت گرد تنظیم نےاس دھماکےکی ذمہ داری نہیں لی ہے، اگرچہ پہلےاس طرح کےایسے حملوں میں دہشت گرد تنظیم القاعدہ الشباب کا ہاتھ رہا ہے۔
First published: Dec 28, 2019 07:54 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading