உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان ۔ چین کی چال ہوئی ناکام ، اقوام متحدہ میں طالبان نہیں رکھ سکے گا اپنی بات

    پاکستان ۔ چین کی چال ہوئی ناکام ، اقوام متحدہ میں طالبان نہیں رکھ سکے گا اپنی بات

    پاکستان ۔ چین کی چال ہوئی ناکام ، اقوام متحدہ میں طالبان نہیں رکھ سکے گا اپنی بات

    مغربی ممالک اس فیصلہ کے خلاف جاسکتے ہیں ، ایسے میں مانا جارہا ہے کہ طالبان کو اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں شامل کرنے کی بات پر پاکستان اور چین کی چال ناکام ہوچکی ہے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      کابل : اقوام متحدہ میں طالبان کو لے کر پاکستان اور چین کا منصوبہ ناکام ہوگیا ہے ۔ اقوام متحدہ نے طالبان سرکار کو جنرل اسمبلی میں خطاب کرنے پر کوئی فیصلہ نہیں کیا ہے ۔ اگر اقوام متحدہ کے فورم پر طالبان کو اپنی بات رکھنے کا موقع دیا جاتا ہے تو اس کا سیدھا مطلب یہ نکالا جاتا کہ طالبان کو پوری دنیا نے منظوری دیدی ہے اور مغربی ممالک اس فیصلہ کے خلاف جاسکتے ہیں ۔ ایسے میں مانا جارہا ہے کہ طالبان کو اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں شامل کرنے کی بات پر پاکستان اور چین کی چال ناکام ہوچکی ہے ۔

      اقوام متحدہ میں افغانستان کے سفارتی مشن پر معزول اشرف غنی سرکار کے نمائندہ کو ہی منظوری ملی ہوئی ہے ۔ اتنا ہی نہیں ، افغان سفیر نے امریکی صدر جو بائیڈن کے سیشن میں بھی حصہ لیا تھا ۔ پاکستانی میڈیا کے مطابق ابھی افغان سرکار کے نمائندے اس وقت تک اقوام متحدہ میں مشن پر قبضہ کئے رہیں گے جب تک تعارفی خط دینے والی اقوام متحدہ کمیٹی اس پر کوئی فیصلہ نہیں کر لیتی ہے ۔

      کیا تھا پورا معاملہ ؟

      15 ستمبر کو اقوام متحدہ سکریٹری جنرل کو موجودہ افغان سفیر غلام اساکزئی کا خط ملا ہے ، جس میں انہوں نے زور دے کر ہا ہے کہ وہ اور ان کی ٹیم کے دیگر اراکین جنرل اسمبلی کی میٹنگ میں افغانستان کی نمائندگی کریں گے ۔ اس کے بعد 20 ستمبر کو طالبان کے قبضہ والے افغانستان کی وزارت خارجہ نے بھی ایک خط لکھ کر سکریٹری جنرل سے جنرل اسمبلی اجلاس میں شرکت کی اجازت مانگی ۔ اب تعارفی خط دینے والی کمیٹی یہ فیصلہ کرے گی کہ کس کو اقوام متحدہ میں نمائندگی دینی ہے ۔

      افغانستان کو اگلے 27 ستمبر کو جنرل اسمبلی میں خطاب کرنا ہے اور اس ات کی کوئی بھی امید نہیں ہے کہ اس وقت تک کمیٹی طالبان کو منظوری دیدے ۔ وہیں ہندوستان مسلسل مطالبہ کررہا ہے کہ افغانستان کی معزول سرکار کے نمائندے کو ہی 27 ستمبر کو ملک کی نمائندگی کرنے کی اجازت دی جائے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: