உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    طالبان کی نئی حکومت فائنل، شوریٰ کونسل چلائے گی حکومت، کوئی خاتون شامل نہیں

    طالبان کی نئی حکومت فائنل، شوریٰ کونسل چلائے گی حکومت، کوئی خاتون شامل نہیں

    طالبان کی نئی حکومت فائنل، شوریٰ کونسل چلائے گی حکومت، کوئی خاتون شامل نہیں

    طالبان ذرائع سے نیوز 18 کو دی گئی اطلاع کے مطابق، آج حکومت سازی سے متعلق فیصلہ لے لیا گیا ہے۔ شوریٰ کاونسل میں طالبان کے اعلیٰ لیڈران، دیگر علاقائی گروپوں کے لوگ شامل کئے جائیں گے۔ حکومت میں کوئی بھی خاتون رکن شامل نہیں ہوگی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      کابل: افغانستان میں طالبان (Taliban) کی شوریٰ کاونسل (Shura Council) ملک پر اقتدار کرے گی۔ تنظیم کے ذرائع کے ذریعہ نیوز 18 کو دی گئی اطلاع کے مطابق، آج حکومت سازی سے متعلق فیصلہ لے لیا گیا ہے۔ شوریٰ کاونسل میں طالبان کے اعلیٰ لیڈران، دیگر علاقائی گروپوں کے لوگ شامل کئے جائیں گے۔ حکومت میں کوئی بھی خاتون رکن شامل نہیں ہوگی۔

      اس کاونسل کے رکن ہی حکومت کی نمائندگی کریں گے۔ ملا عبدالغنی برادر سیاسی دفتر کے ہیڈ ہوسکتے ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ نئی حکومتم یں 80 فیصد اراکین طالبان کی دوحہ ٹیم سے ہوں گے۔

      سال 2010 سے ہی طالبان کے سینئر لیڈر دوحہ میں رہ رہے ہیں۔ مقصد یہ تھا کہ ایک دفتر بنے، جس کے ذریعہ طالبان، افغانستان حکومت، امریکہ اور دیگر ممالک کے درمیان مستقل حل تلاش کیا جائے۔ طالبان کا دفت شروع ہونے کے بعد امن مذاکرات 2013 میں بند ہوگئی تھی کیونکہ افغانستان حکومت نے مخالفت کی تھی۔ حکومت کا کہنا تھا کہ طالبان کے دفتر کو ایسا دکھایا جا رہا ہے جیسے یہ کوئی برخاست حکومت ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: