உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    خیبرپختونخوا میں تحریک طالبان پاکستان دہشت گردوں کا حملہ، پاکستان آرمی کیپٹن کی موت

    27 سالہ سکندر اپنی یونٹ سے خفیہ اطلاع ملنے کے بعد فوجی آپریشن کرنے گئے تھے۔ اسی دوران پاکستان طالبان (تحریک طالبان) کے دہشت گردوں نے حملہ کیا۔

    27 سالہ سکندر اپنی یونٹ سے خفیہ اطلاع ملنے کے بعد فوجی آپریشن کرنے گئے تھے۔ اسی دوران پاکستان طالبان (تحریک طالبان) کے دہشت گردوں نے حملہ کیا۔

    27 سالہ سکندر اپنی یونٹ سے خفیہ اطلاع ملنے کے بعد فوجی آپریشن کرنے گئے تھے۔ اسی دوران پاکستان طالبان (تحریک طالبان) کے دہشت گردوں نے حملہ کیا۔

    • Share this:
      اسلام آباد: خیبر پختونخوا (Khyber Pakhtunkhwa) میں جمعرات کو تحریک طالبان (Tehreek-i-Taliban) پاکستان نے دہشت گردانہ حملہ کیا۔ اس میں پاک فوج کا ایک کیپٹن مارا گیا۔ یہاں عمران خان کی پارٹی پاکستان (PTI) تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی حکومت ہے۔ ٹی ٹی پی (TTP) نے ایک مہینے میں ساتواں حملہ کیا ہے۔

      جمعرات کی شام پاکستان آرمی (Pakistan Army) کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ مقتول کپتان کا نام سکندر تھا۔ 27 سالہ سکندر اپنی یونٹ سے خفیہ اطلاع ملنے کے بعد فوجی آپریشن کرنے گئے تھے۔ اسی دوران پاکستان طالبان (تحریک طالبان) کے دہشت گردوں نے حملہ کیا۔

      کچھ خبروں میں کہا گیا ہے کہ سکندر فائرنگ کے دوران پکڑا گیا اور دہشت گردوں کی گولیوں کا نشانہ بن گیا۔ انکاؤنٹر میں ایک دہشت گرد بھی مارا گیا ہے۔

      ٹی ٹی پی نے عمران حکومت کو دی ہے دھمکی ۔
      افغانستان میں طالبان کی حکومت کے بعد اس کا صاف طور پر اثر پاکستان میں دیکھا جا رہا ہے۔ پاکستان میں طالبان کے حوصلے بلند ہو وہے ہیں  اور یہ مسلسل پاک فوج پر حملے کر رہا ہے۔ ٹی ٹی پی نے دھمکی دی ہے کہ کسی بھی سرکاری افسر یا کمپنی کو اس علاقے میں کسی بھی قیمت پر کام کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: