உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Heineken: دنیا کی تاریخ کا پہلا جوتا! جس کے تلوے میں ہوگی بیئر، ڈچ کمپنی کا سب سے مہنگا جوتا

    تصویر بشکریہ moneycontrol

    تصویر بشکریہ moneycontrol

    کمپنی نے اپنی ہینکن سلور بیئر کو فروغ دینے کے لیے ابھی تک صرف 32 ایسے جوڑے بنائے ہیں۔ کمپنی نے ٹویٹر پر محدود ایڈیشن کے جوتے کے ویڈیو پرومو کے ساتھ کہا کہ ہینکن آپ کے عام جوتوں سے ہٹ کر ایسا جوتا تیار کیا گیا ہے، اس سے آپ کو ایسا محسوس ہوگا کہ آپ خود بیئر پر چل رہے ہیں۔

    • Share this:
      ڈچ شراب بنانے والی مشہور کمپنی ہینکن (Heineken) نے بیئر سے بھرے تلووں والے جوتوں کو بازار میں فروخت کے لیے رکھا ہے۔ ہینکن کے اس خاص جوتے کو بوتلوں کے رنگ میں ڈیزائن کیا گیا ہے۔ اس کی خصوصیت یہ ہے کہ بہ آسانی جب دل چاہے بیئر کو نکال کر پیا بھی جاسکتا ہے۔

      کمپنی نے اپنی ہینکن سلور بیئر کو فروغ دینے کے لیے ابھی تک صرف 32 ایسے جوڑے بنائے ہیں۔ کمپنی نے ٹویٹر پر محدود ایڈیشن کے جوتے کے ویڈیو پرومو کے ساتھ کہا کہ ہینکن آپ کے عام جوتوں سے ہٹ کر نییا جوتا بنایا ہے، اس سے آپ کو ایسا محسوس ہوگا کہ آپ خود بیئر پر چل رہے ہیں۔ اس خاص قسم کے جوتوں کو مشہور جوتوں کے ڈیزائنر ڈومینک کیمبرون (Dominic Ciambrone) کے تعاون سے ڈیزائن کیا گیا ہے۔


      جوتے میں خوبصورتی اور پائیداری کے ماہر کیمبرو نے کہا کہ ہینکن پر کام کرنا ایک تفریحی چیلنج ہے۔ ہم جدت طرازی اور خوبصورتی کو آگے بڑھانے کا جذبہ رکھتے ہیں اور اس کی عکاسی کرنے کے لیے ایک نیا ڈیزائن بنایا ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:

      MP News: ہندوستان، پاکستان اور بنگلہ دیش کے بیچ فیڈریشن بناکر مسائل کو حل کیا جا سکتا ہے : پنڈت راج ناتھ شرما

      انہوں نے مزید کہا کہ یہ جوتا نہ صرف ہینکن سلور کی خاص پیشکش کو سامنے لاتا ہے، بلکہ اس جوتے کے استعمال سے محظوظ بھی ہوا جاسکتا ہے۔ میں یہ نہیں کہہ سکتا کہ میں نے پہلے کبھی ایسا اسنیکر جوتا ڈیزائن کیا ہے جس میں اصلی بیئر ہو۔ سوشل میڈیا صارفین نے اس پروڈکٹ پر مزاحیہ ردعمل ظاہر کیا۔

      LPG Cylinder:مہنگے ہوئے بڑے سلینڈر تو چھوٹے سلینڈروں کے بڑھی فروخت،آگرہ میں فروخت 30 فیصد تک بڑھی

      ایک صارف نے کہا کہ تو اگر ہم بیئر پینا چاہتے ہیں تو کیا راست طور پر جوتوں کو ہی منہ لگا لیں؟ ایک اور شخص نے لکھا کہ آپ جہاں بھی جائیں وہیں بیئر سے لطف اندوز ہونے کا یہ واحد طریقہ ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: