ہوم » نیوز » عالمی منظر

پاکستانی اداکارہ نے طارق فتح کی لگائی کلاس ، کہا : یہ حقیقی واقعہ نہیں ، میری فلم کا سین ہے

مہوش کی یہ فلم 2018 میں ریلیز ہوئی تھی ۔ اس کے بعد طارق فتح نے اپنا ٹویٹ ڈیلیٹ کردیا ، لیکن مہوش کا یہ ٹویٹ کافی وائرل ہورہا ہے ۔

  • Share this:
پاکستانی اداکارہ نے طارق فتح کی لگائی کلاس ، کہا : یہ حقیقی واقعہ نہیں ، میری فلم کا سین ہے
طارق فتح کی فائل فوٹو ۔

پاکستانی نزاد کنیڈیائی رائٹر اور صحافی طارق فتح حال ہی میں کئے گئے اپنے ایک ٹویٹ کو لے کر ایک مرتبہ پھر تنازع میں پھنس گئے ہیں ۔ دراصل انہوں نے ٹویٹر پر پاکستانی اداکارہ مہوش حیات کی فلم لوڈ ویڈنگ کے ویڈیو کے اسکرین شاٹ کو حقیقی واقعہ بتاتے ہوئے سوشل سائٹ پر شیئر کیا تھا ۔ طارق فتح نے اسکرین شاٹ کو پوسٹ کرتے ہوتے ٹویٹ کیا کہ ایک پاکستانی ماں پولیو ڈراپ پلانے والے ملازمین کو دیکھ کر اپنے گھر کا دروازہ بند کرلیتی ہے اور ان ملازمین پر چینختے ہوئے کہتی ہے کہ میں اپنے بچوں کو کبھی بھی اس ڈراپ کو پینے کی اجازت نہیں دوں گی ، میرے بچے کبھی بھی اس کو نہیں پئیں گے ۔


ادھر مہوش حیات نے ان کی اس پوسٹ پر سخت رد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ کچھ بھی پوسٹ کرنے سے پہلے ایک مرتبہ اس کی جانچ ضرور کرلیں ۔ مہوش سوشل میڈیا پر کافی سرگرم رہتی ہیں اور اپنی تصویریں پوسٹ کرتی رہتی ہیں ۔ ساتھ ہی سماجی اور عوامی مفاد سے وابستہ معاملات پر بے باکی سے اپنی رائے کا اظہار بھی کرتی رہتی ہیں ۔



طارق فتح کے اس ٹویٹ پر مہوش نے اپنا رد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ اس پر اپنی رائے دینے کیلئے شکریہ ، لیکن مستقبل میں صداقت کی جانچ کے بغیر کچھ بھی پوسٹ کرنے سے گریز کریں ۔ یہ میری فلم لوڈ ویڈنگ کا ایک سین ہے اور اس میں پولیو ڈراپ پلانے والی ملازمہ میں ہی بنی ہوں ، دیگر خواتین میری ساتھی فنکارہ ہیں ۔ اس کے ذریعہ اس معاملہ پر ہم لوگوں کے درمیان بیداری پیدا کرتے ہیں ۔

مہوش کی یہ فلم 2018 میں ریلیز ہوئی تھی ۔ اس کے بعد طارق فتح نے اپنا ٹویٹ ڈیلیٹ کردیا ، لیکن مہوش کا یہ ٹویٹ کافی وائرل ہورہا ہے ۔
First published: Jan 16, 2020 05:57 PM IST