امریکی فوج میں خواجہ سراؤں کی بھرتی کا راستہ صاف

واشنگٹن۔ امریکہ میں اگلے سال یکم جنوری سے خواجہ سرا(مخنث) بھی فوج میں بھرتی کے اہل ہوں گے۔

Dec 12, 2017 06:51 PM IST | Updated on: Dec 12, 2017 06:51 PM IST
امریکی فوج میں خواجہ سراؤں کی بھرتی کا راستہ صاف

دوسری طرف امریکی صدر دفتر وائٹ ہاؤس کا کہنا ہے کہ وزارت قانون اس کے متبادل کا جائزہ لے رہا ہے۔

واشنگٹن۔ امریکہ میں اگلے سال یکم جنوری سے خواجہ سرا(مخنث) بھی فوج میں بھرتی کے اہل ہوں گے۔ امریکہ کی وفاقی عدالت نے فوج میں ٹرانس جینڈر کی بھرتی پر حکومت کی جانب سے لاگو پابندی کو جاری رکھے جانے کی درخواست كو کل مسترد کر دیا، جس کے بعد فوج میں ان کی بھرتی کئے جانے کا راستہ ہموار ہو گیا ہے۔

امریکی وزارت دفاع کے ہیڈ کوارٹر پنٹاگن کی جانب سے جاری بیان کے مطابق وفاقی عدالت کی جج كولين كولار كوٹلي نے خواجہ سراؤں کی فوج میں بھرتی سے متعلق اپنے 30 اکتوبر کو دیئے گئے حکم کو منسوخ کرنے سے انکار کر دیا۔ بیان میں کہا گیا کہ عدالت کے حکم پر عمل کیا جائے گا اور یکم جنوری سے مخنث امیدواروں کی بھرتی کاعمل شروع کیا جائے گا۔

Loading...

دوسری طرف امریکی صدر دفتر وائٹ ہاؤس کا کہنا ہے کہ وزارت قانون اس کے متبادل کا جائزہ لے رہا ہے۔

Loading...