ہوم » نیوز » عالمی منظر

متحدہ عرب امارات میں ویزا کے لئے نیک چلنی کا سرٹیفیکیٹ لازمی

ابو ظہبی متحدہ عرب امارات (یو اے ای) نے کہا کہ غیر ملکی باشندوں کو ان کے دیش میں کام کرنے کے لئے درخواست دینے سے پہلے اپنے ملک سےبہتر اخلاق اور اچھے چال چلن کا سرٹیفیکیٹ دینا ہوگا۔سرکاری نیوز ایجنسی ’ڈبلیو ایم‘ نے آج یہاں بتایا کہ درخواست دہندہ کو یہ سرٹیفیکیٹ اپنے ملک سے لینا ہوگا یا اس ملک سے لینا ہوگا جہاں وہ گزشتہ پانچ برسوں سےرہ رہا ہے۔اس کے علاوہ اس کو اپنے ملک میں واقع یو اے ای سفارت خانہ یا وزارت برائے امورخارجہ اور عالمی تعاون کے’کسٹمر ہیپینیس سینٹر ‘سے تصدیق نامہ حاصل کرنا ہوگا۔

  • UNI
  • Last Updated: Feb 05, 2018 10:29 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
متحدہ عرب امارات میں ویزا کے لئے نیک چلنی کا سرٹیفیکیٹ لازمی
یو اے ای نے ورک ویزا کیلئے اچھے برتاﺅ کے سرٹیفکیٹ کی شرط عائد کردی

دبئی۔ابو ظہبی متحدہ عرب امارات (یو اے ای) نے کہا کہ غیر ملکی باشندوں کو ان کے دیش میں کام کرنے کے لئے درخواست دینے سے پہلے اپنے ملک سےبہتر اخلاق اور اچھے چال چلن کا سرٹیفیکیٹ دینا ہوگا۔سرکاری نیوز ایجنسی ’ڈبلیو ایم‘ نے آج یہاں بتایا کہ درخواست دہندہ کو یہ سرٹیفیکیٹ اپنے ملک سے لینا ہوگا یا اس ملک سے لینا ہوگا جہاں وہ گزشتہ پانچ برسوں سےرہ رہا ہے۔اس کے علاوہ اس کو اپنے ملک میں واقع یو اے ای سفارت خانہ یا وزارت برائے امورخارجہ اور عالمی تعاون کے’کسٹمر ہیپینیس سینٹر ‘سے تصدیق نامہ حاصل کرنا ہوگا۔

سرکار نے یہ شرط کابینہ کے فیصلے کے بعد اور ملک کی حفاظت کو بہتر بنانے کی کوششوں کے تحت کل نافذ کیا ہے۔ اس شرط کے مطابق متحدہ عرب امارات میں کام کرنے کے خواہشمند تمام درخواست دہندگان کو تصدیق نامہ دینا ہوگا، لیکن ان پر منحصر لوگوں کے لئے اس کی ضرورت نہیں ہوگی۔ اس کے علاوہ سیاحوں کو بھی اس تصدیق نامہ کی حاجت نہیں ہوگی۔

یہ درخواست نامہ حاصل کرنے کے لئے شرطوں کا خاص ذکر نہیں کیا گیا ہے لیکن اس کو پولس یا مقامی انتظامیہ کے ذریعہ مہیا کرایا جانا چاہئے۔

گذشتہ سال کے اخیر میں یو اے ای انتظامیہ نے ملازمین کی درجہ بندی کے نظام میںتبدیلی کی تھی، جن کے تحت ملازمین کی لیاقت پر خصوصی زور دیا گیا تھا۔ نئے قانون کے تحت ہنرمند ملازمین کی تقرری کرنے والی کمپنیوں کو نئے ورک پرمٹ جاری کرانے یا پرانے پرمٹ کی تجدید کے لئے سرکار کو کم فیس ادا کرنی ہوگی۔

First published: Feb 05, 2018 10:29 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading