உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    یوکرین کی سرحد پر پھنسے ہندستانیوں کیلئے ہنگری، پولینڈ سے پہنچی مدد، حکومت نے جاری کئے نمبر

    Youtube Video

    Ukraine-Russia Conflict: یوکرین میں پھنسے ہوئے ہندوستانی طلباء کی مدد کے لیے حکومت ہند نے 24 گھنٹے ہیلپ لائن نمبر جاری کئے ہیں۔ اس کے لیے دہلی میں ایک کنٹرول روم قائم کیا گیا ہے۔ حکومت کی جانب سے ان نمبرز +911123012113, +911123914104, +911123017905 اورنمبر 1800118797 جاری کیے گئے ہیں۔

    • Share this:
      Ukraine-Russia Conflict: روس نے جمعرات کو یوکرین کے خلاف فوجی کارروائی شروع کر دی ہے۔ بگڑتی ہوئی صورتحال کے پیش نظر بھارتی حکومت ہند یوکرین سے اپنے شہریوں کو نکالنے کی مسلسل کوششیں کر رہی ہے۔ جمعہ کو وزارت خارجہ کی طرف سے سرکاری ٹیموں کے بارے میں معلومات شیئر کی گئی ہیں، جو ہنگری، پولینڈ، سلوواکیہ اور رومانیہ میں ہندوستانی شہریوں کی مدد کے لیے کام کر رہی ہیں۔ روسی صدر ولادیمیر پوتن کے ساتھ بات چیت میں وزیر اعظم نریندر مودی نے ہندوستانی شہریوں اور خاص طور پر طلباء کی حفاظت کا مسئلہ بھی اٹھایا تھا۔

      وزارت خارجہ کے ترجمان ارندم باغچی نے وزارت کی ٹیموں کے بارے میں معلومات شیئر کی ہیں۔ انھوں نے لکھا، 'ہنگری، پولینڈ، سلوواکیہ اور رومانیہ میں ہندوستانی سفارتخانوں کی ٹیمیں یوکرین سے ہندوستانی شہریوں کو نکالنے کے لیے یوکرین کے ساتھ زمینی سرحدوں پر پہنچ رہی ہیں۔' انھوں نے مزید لکھا، 'یوکرین میں سرحد پر موجود ہندوستانی شہری ان ٹیموں سے رابطہ کر سکتے ہیں۔

      حکومت نے جاری کئے ہیلپ لائن نمبر۔
      یوکرین میں پھنسے ہوئے ہندوستانی طلباء کی مدد کے لیے حکومت ہند نے 24 گھنٹے ہیلپ لائن نمبر جاری کئے ہیں۔ اس کے لیے دہلی میں ایک کنٹرول روم قائم کیا گیا ہے۔ حکومت کی جانب سے ان نمبرز +911123012113, +911123914104, +911123017905 اورنمبر 1800118797 جاری کیے گئے ہیں۔

      ہندستانی طلباء نے تہہ خانے میں لی پناہ
      کم از کم 400 ہندوستانی طلباء نے یوکرین میں روس کی سرحد سے متصل شہر سومی پر روسی فوجیوں کے قبضہ کے بعد ایک تہہ خانے میں پناہ لی ہے اور حکومت ہند سے انہیں وہاں سے نکالنے کی اپیل کی ہے۔ ان میں سے زیادہ تر سومی اسٹیٹ میڈیکل کالج کے طالب علم ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ باہر گولیوں کی آواز کی وجہ سے وہ اپنی حفاظت کے لیے پریشان ہیں۔

      طالب علم للت کمار نے 'PTI-Bhasha' کو بتایا، 'اس وقت ہم اپنے ہاسٹل کے تہہ خانے میں چھپے ہوئے ہیں اور ہمیں نہیں معلوم کہ ہم یہاں کب تک محفوظ رہ سکیں گے۔ ہم حکومت ہند سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ ہمیں یوکرین کے مشرقی حصے سے نکالے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: