உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Russia-Ukraine War: کیو پر منڈرا رہا ہے بڑا خطرہ؟ روس کی مقامی لوگوں کو وارننگ- فوراً گھر چھوڑ دیں

    کیو پر منڈرا رہا ہے بڑا خطرہ؟ روس کی مقامی لوگوں کو وارننگ- فوراً گھر چھوڑ دیں

    کیو پر منڈرا رہا ہے بڑا خطرہ؟ روس کی مقامی لوگوں کو وارننگ- فوراً گھر چھوڑ دیں

    Russia-Ukraine War: یوکرینی افسران نے روسی فوج پر مشرقی شہر کھارکیو سمیت کئی شہروں میں رہائشی علاقوں پر حملے کرنے کا الزام لگایا ہے۔ بتادیں کہ یوکرین کے دوسرے سب سے بڑے شہر کھارکیو میں دونوں ممالک کی افواج کے درمیان جدوجہد تیز ہوگئی ہے۔ روس کا کہنا ہے کہ وہ شہریوں کو نشانہ نہیں بناتا ہے۔

    • Share this:
      کیو: روس کے وزارت داخلہ نے منگل کو بتایا کہ روسی فوجیوں نے راجدھانی کیو میں یوکرین (Russia-Ukraine War) کی خفیہ خدمات کو بنیادی ڈھانچے پر حملہ کیا اور آس پاس رہنے والے لوگوں سے وہاں سے چلے جانے کے لئے کہا۔ روسی وزارت داخلہ کے ترجمان ایگور کونا شینکوو (Igor Konashenkov) نے کہا، ’روس پر اطلاع حملوں کو دبانے کے لئے، ایس بی یو (یوکرین کی سیکورٹی خدمات) کے تکنیکی بنیادی ڈھانچے اور کیو میں 72 ویں اہم پی ایس او (نفسیاتی آپریشنز یونٹ) مرکز پر یہ حملہ انتہائی درست ہتھیاروں سے کیا جائے گا۔" کوناشین کوو نے کہا، ’ہم نے ریلے نوڈس کے پاس رہنے والے کیو کے لوگوں سے اپنے گھر چھوڑنے کے لئے کہا ہے‘۔

      ایگور کونا شینکوو (Igor Konashenkov) کا یہ بیان ایسے وقت میں آیا ہے جب روسی فوجی یوکرین کی راجدھانی کیو پر قبضہ کرنے کی کوشش تیز کر رہے ہیں۔ یوکرینی افسران نے روسی فوج پر مشرقی شہر کھارکیو سمیت کئی شہروں میں رہائشی علاقوں پر حملے کرنے کا الزام لگایا ہے۔ بتا دیں کہ یوکرین کے دوسرے سب سے بڑے شہر کھارکیو میں دونوں ممالک کی افواج کے درمیان جدوجہد تیز ہوگیا ہے۔ روس کا کہنا ہے کہ وہ شہریوں کو نشانہ نہیں بناتا ہے۔ یوکرین کا کہنا ہے کہ روس کے حملے کے بعد سے اب تک 350 شہری مارے جاچکے ہیں۔

      کیو کی طرف بڑھ رہا 40 میل لمبا قافلہ

      واضح رہے کہ گزشتہ پانچ دنوں سے جاری جنگ سے روس الگ تھلگ پڑتا جا رہا ہے جبکہ یوکرین سے بھی اسے غیر متوقع مزاحمت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ بیلا روس کی سرحد پر پیر کو جب روس اور یوکرین کے درمیان بات چیت ہو رہی تھی تبھی کیو میں دھماکے سنائی دے رہے تھے اور روسی فوجی 30 لاکھ کی آبادی والی یوکرین کی راجدھانی کیو کی طرف بڑھ رہے تھے۔

      میکسر ٹکنالوجی کے ذریعہ دستیاب کرائی گئی سیٹلائٹ تصاویر کے مطابق بکتر بند گاڑیوں، ٹینک، توپ اور دیگر معاون گاڑیوں کا قافلہ شہر سے تقریباً 25 کلو میٹر کی دوری پر ہے اور اس کی لمبائی تقریباً 40 میل ہے۔ یوکرین کے دوسرے سب سے بڑے اور تقریباً 15 لاکھ آبادی والے شہر کھارکیو سے آئے ویڈیو میں نظر آرہا ہے کہ رہائشی علاقوں میں بمباری ہو رہی ہے۔ زبردست دھماکوں سے مسلسل اپارٹمنٹ عمارتوں میں کمپن ہو رہا ہے اور آسمان میں آگ اور دھوئیں کا غبار دکھائی دے رہا ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: