உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Hambantota Port: سری لنکا کے بندرگاہ پر چینی جاسوسی جہاز کی موجودگی! آخر کیا ہے اس کے سیاسی معنی؟

    ہندوستان سمجھ گیا کہ ہمبنٹوٹا پورٹ پروجیکٹ تجارتی طور پر قابل عمل نہیں ہوگا۔

    ہندوستان سمجھ گیا کہ ہمبنٹوٹا پورٹ پروجیکٹ تجارتی طور پر قابل عمل نہیں ہوگا۔

    سری لنکا، چین اور دنیا اس بات کا مشاہدہ کر رہی ہے کہ ہمبنٹوٹا بندرگاہ کی تجارتی کارکردگی کس طرح ایک بڑی ناکامی ہے۔ لیکن وہی بندرگاہ اب چین کو فوجی استعمال کے لیے دستیاب ہے!

    • Share this:
      چنتامنی مہاپاترا

      سری لنکا حکومت کی پریشانیوں میں اضافہ ہوتا جارہا ہے، کیونکہ سری لنکا کے ہمبنٹوٹا بندرگاہ (Hambantota Port) پر چینی جاسوس جہاز کی موجودگی پر امریکہ کے علاوہ ہندوستان بھی اسٹراٹیجک انداز میں ناراض ہے۔ یہ اقدام چین کی جانب سے چھوٹے ممالک کو قرضوں کے جال میں دھکیلنے کے برابر دیکھا جارہا ہے۔ یہ ان ممالک کو بلیک میل کرکے ان پر ناجائز کنٹرول رکھنے کے چین کے عزم کی ترجمانی کرتا ہے۔

      کاش سری لنکا، ہندوستان کے ہمبنٹوٹا بندرگاہ کی ترقی سے انکار کی وجہ کو سمجھتا، کاش کولمبو کو چینی قرض قبول کرنے کے معاہدے پر دستخط کرنے کے لیے چینی استدلال کے لالچ میں نہ آتا اور چینی انجینئروں، تکنیکی ماہرین اور مزدوروں کو بندرگاہ کے ایک پرجوش منصوبے کے لیے اجازت دی جاتی۔ تو یہ ملک اس وقت جس حالت سے گزر رہا ہے شاید اس سے بچا یا جا سکتا تھا۔

      ہندوستان سمجھ گیا کہ ہمبنٹوٹا پورٹ پروجیکٹ تجارتی طور پر قابل عمل نہیں ہوگا۔ چین کو بھی اس کا ہوش تھا، لیکن تب چین کے ذہن میں دیگر اسٹریٹیجک منصوبے تھے۔ تو اس نے سری لنکا کو بہت بڑا قرضہ دیا، بندرگاہ بنائی، اور قرض کی واپسی کا مطالبہ کیا۔ سری لنکا قرض بھی ادا نہیں کر سکا اور پھر بیجنگ نے کولمبو کو مجبور کیا کہ وہ اسے 99 سالہ لیز پر بندرگاہ کو چلانے کے لیے چین کے حوالے کر دے!

      سری لنکا، چین اور دنیا اس بات کا مشاہدہ کر رہی ہے کہ ہمبنٹوٹا بندرگاہ کی تجارتی کارکردگی کس طرح ایک بڑی ناکامی ہے۔ لیکن وہی بندرگاہ اب چین کو فوجی استعمال کے لیے دستیاب ہے! جب ہندوستان اور امریکہ کے بہت سے تزویراتی تجزیہ کاروں نے ہندوستان کو گھیرنے اور بحر ہند کے علاقے پر چینی تسلط کو بڑھانے کے لئے چین کی موتیوں کی حکمت عملی سے خدشہ ظاہر کیا تو تنقید کرنے والوں کی تعداد کم نہیں تھی۔

      یہ بھی پڑھیں:

      افغانستان: Kabul کی ایک مسجد میں بڑا دھماکہ، امام سمیت 30 افراد کی موت، 50 زخمی

      Mukhtar Ansari پر ED کی بڑی کارروائی، یوپی سے دہلی تک مافیہ کے 11 ٹھکانوں پر چھاپہ ماری

      ناندیڑ: جنید پٹھان نے UPSC کے تحت لئے جانے والے EPFO امتحان میں حاصل کی کامیابی

      پاکستان کی جانب سے جموں میں ڈرون سے بھیجے گئے ہتھیار و گولہ۔بارود برآمد، ایک دہشت گرد ڈھیر

      چنتامنی مہاپاترا ایڈیٹر ’انڈین فارن افیئر جرنل‘، کالنگا انسٹی ٹیوٹ آف انڈو پیسیفک اسٹڈیز کے بانی اور اعزازی چیئرپرسن ہیں۔ وہ جے این یو کے پروفیسر ہیں۔ اس مضمون میں بیان کردہ خیالات مصنف کے ذاتی خیالات ہیں اور اس سے ادارہ کا اتفاق ضروری نہیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: