உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    نیوزی لینڈ کے ساتھ اظہار یکجہتی: دنیا کی سب سے اونچی عمارت برج خلیفہ سے عام کیا گیا امن کا پیغام

    برج الخلیفہ پر جیسنڈا آرڈرن کی تصویر: فوٹو، سوشل میڈیا

    برج الخلیفہ پر جیسنڈا آرڈرن کی تصویر: فوٹو، سوشل میڈیا

    نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم جیسنڈا آرڈرن کو خراج تحسین پیش کرنے کے لئے دبئی میں جمعہ کے روز دنیا کی بلند ترین عمارت برج خلیفہ پران کی تصویر آویزاں کی گئی

    • Agencies
    • Last Updated :
    • Share this:
      نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم جیسنڈا آرڈرن نے کرائسٹ چرچ کی دو مسجدوں میں ہوئے دہشت گردانہ حملے کے بعد ملک کی صورت حال کو جس بخوبی انداز میں سنبھالا، اس کی دنیا بھر میں ستائش ہو رہی ہے۔ متاثرہ کنبوں سے اظہار تعزیت کے لئے ان سے ملاقات کرتے وقت انہوں نے اپنے سر کو ڈھانپ رکھا تھا اور سیاہ کپڑے زیب تن کر رکھے تھے۔ انہوں نے گلے لگا کر متاثرہ کنبوں کو تسلی دی اور انہیں ہر ممکن امداد کی یقین دہانی کرائی۔

      نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم جیسنڈا آرڈرن کو خراج تحسین پیش کرنے کے لئے دبئی میں جمعہ کے روز دنیا کی بلند ترین عمارت برج خلیفہ پران کی تصویر آویزاں کی گئی۔ یہ اقدام کرائسٹ چرچ کی دو مساجد میں دہشت گردانہ حملوں کے بعد آرڈن کی جانب سے مسلم کمیونٹی کے لئے ہمدردی اور یکجہتی کے شان دار مظاہرے پر انہیں خراج تحسین پیش کرنے اور شکریہ ادا کرنے کے واسطے کیا گیا۔

      متحدہ عرب امارات کے وزیر اعظم نے نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم کا شکریہ ادا کرتے ہوئے ٹویٹ کیا ’’ نیوزی لینڈ آج مسجد حملہ کے متاثرین کے لئے پرامن تھا۔ شکریہ وزیر اعظم جیسنڈا آرڈرن اور نیوزی لینڈ آپ کے اظہار یکجہتی اور حمایت کے لئے جس نے 1.5 بلین مسلمانوں کا دل جیتا۔ اس دہشت گردانہ حملہ نے دنیا بھر کے مسلمانوں کو ہلا کر رکھ دیا ہے‘‘۔

      گزشتہ 15 مارچ کو نماز جمعہ کے دوران ان حملوں میں 50 افراد شہید اور درجنوں زخمی ہو گئے تھے۔ جیسینڈا آرڈرن نے گزشتہ روز یعنی 22 مارچ کو  نماز جمعہ کے بعد شہداء کے جنازے میں شریک ہو کر پوری دنیا کی توجہ اپنی جانب مبذول کرا لی تھی۔ نیوزی لینڈ میں جمعہ کی اذان براہ راست نشر کی گئی۔ بعد ازاں کرائسٹ چرچ مساجد کے 50 شہداء کی یاد میں دو منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی۔

       

       

      First published: