ہوم » نیوز » عالمی منظر

ایران نے داغے تین ٹھکانوں سے 16 میزائل : امریکہ

امریکی وزیر دفاع مارک ایسپر نے نامہ نگاروں کو بتایا کہ ان میں سے 11 میزائلوں نے الشہد فوجی اڈے کو نشانہ بنایا اور ایک میزائل اربیل میں پھٹا۔ انہوں نے کہا کہ اس حملےکی وجہ خیمے، پارکنگ، ایک ہیلی کاپٹر اور گاڑیوں کی آمدورفت کا راستہ تباہ ہو گیا ہے۔

  • Share this:
ایران نے داغے تین ٹھکانوں سے 16 میزائل : امریکہ
US Defense Secretary Mark Esper

ایران (iran ) نے منگل کے روز اپنے تین ٹھکانوں سے اتحادی فوج کے عراق میں واقع فوجی اڈوں پر مختصر فاصلے سے 16 بیلسٹک میزائیل (missile ) داغے۔ یہ بات امریکہ نے  جمعرات کے روز کہی ہے۔

امریکی وزیر دفاع مارک ایسپر ( US Defense Secretary Mark Esper) نے نامہ نگاروں کو بتایا کہ ان میں سے 11 میزائلوں نے الشہد فوجی اڈے کو نشانہ بنایا اور ایک میزائل اربیل میں پھٹا۔ انہوں نے کہا کہ اس حملےکی وجہ خیمے، پارکنگ، ایک ہیلی کاپٹر اور گاڑیوں کی آمدورفت کا راستہ تباہ ہو گیا ہے۔

غورطلب بات یہ ہے کہ پینبگن نے ایرانی حملے کے بعد کہا تھا کہ تہران کی جانب سے دو امریکی اور اتحادی فوجی اڈوں پر تقریباً 12 سے زائد میزائلیں داغی گیئں ہیں۔ ایرانی فوج اسلامک ریولیوشنری گارڈ کور نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے دعوی کیا ہے کہ اس میں کم از کم 80 امریکی جوان مارے گئے ہیں۔ ایرانی فوج نے اپنے اعلی کمانڈر میجر جنرل قاسم سلیمانی کے عراقی دارالحکومت بغداد میں ہوئے امریکی حملے میں مارے جانے سے بدلہ کے تیئں یہ حملہ کرنے کی بات کہی ہے۔

First published: Jan 09, 2020 11:02 AM IST