உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Joe Biden: فلسطینی ہسپتالوں کیلئے 100 ملین ڈالر عطیہ کا وعدہ، جدید طبی کی دستیابی پر زور

    امریکی صدر جو بائیڈن

    امریکی صدر جو بائیڈن

    بائیڈن نے عہدہ سنبھالنے کے بعد سے زیادہ تر امداد بحال کر دی ہے، لیکن اسرائیل فلسطین امن عمل کو دوبارہ شروع کرنے میں کوئی پیش رفت نہیں کی، جو ایک دہائی سے زیادہ عرصہ قبل ختم ہو گیا۔ ہسپتال کے سی ای او ڈاکٹر فادی عطرش نے بائیڈن کے دورے کو ’فلسطینی عوام کی حمایت کا دلیرانہ بیان‘ قرار دیا۔

    • Share this:
      امریکی صدر جو بائیڈن (Joe Biden) نے مشرقی یروشلم (East Jerusalem) کے ہسپتالوں کے لیے 100 ملین امریکی ڈالر کی امداد کا وعدہ کیا ہے جو فلسطینیوں کے لیے صحت کی دیکھ بھال کے لیے ’ریڑھ کی ہڈی‘ کے طور پر کام کرتے ہیں۔ انہوں نے جمعہ کو آگسٹا وکٹوریہ ہسپتال کے دورے کے دوران اس کا اعلان کیا ہے، جو مقبوضہ مغربی کنارے اور غزہ میں فلسطینیوں کو کینسر کے مریضوں کے لیے علاج اور بچوں کے گردوں کے ڈائیلاسز سمیت جدید طبی دیکھ بھال فراہم کرتا ہے۔

      یہ فنڈنگ ​​امریکی کانگریس کی منظوری سے مشروط ہے اور کئی سال میں ادا کی جائے گی۔ بائیڈن نے چھ اسپتالوں کو ’فلسطینی صحت کی دیکھ بھال کے نظام کی ریڑھ کی ہڈی‘ قرار دیا۔ یہ امداد کا اس وقت اعلان کیا گیا، جب ٹرمپ انتظامیہ نے 2018 میں فلسطینیوں کے لیے امداد کی ایک بڑی معطلی کے حصے کے طور پر ہسپتالوں کے لیے 25 ملین امریکی ڈالر کی کٹوتی کی۔

      بائیڈن نے عہدہ سنبھالنے کے بعد سے زیادہ تر امداد بحال کر دی ہے، لیکن اسرائیل فلسطین امن عمل کو دوبارہ شروع کرنے میں کوئی پیش رفت نہیں کی، جو ایک دہائی سے زیادہ عرصہ قبل ختم ہو گیا۔ ہسپتال کے سی ای او ڈاکٹر فادی عطرش نے بائیڈن کے دورے کو ’فلسطینی عوام کی حمایت کا دلیرانہ بیان‘ قرار دیا۔ بائیڈن جمعہ کے روز بعد میں مقبوضہ مغربی کنارے میں فلسطینی رہنماؤں سے ملاقات کی۔

      مزید پڑھیں:

      اسرائیل نے 1967 کی مشرق وسطی کی جنگ میں مغربی کنارے اور غزہ کے ساتھ مشرقی یروشلم پر قبضہ کر لیا تھا۔ فلسطینی یہ تینوں اپنی مستقبل کی ریاست کے لیے چاہتے ہیں۔ اسرائیل نے مشرقی یروشلم کو ایک ایسے اقدام میں ضم کر لیا جس کو بین الاقوامی سطح پر تسلیم نہیں کیا گیا اور وہ پورے شہر کو اپنا دارالحکومت سمجھتا ہے۔ فلسطینی چاہتے ہیں کہ مشرقی یروشلم ان کی مستقبل کی ریاست کا دارالحکومت ہو اور اس کی قسمت صدیوں پرانے تنازعے کا مرکز ہے۔

      مزید پڑھیں:


      مشرقی یروشلم کے چھ ہسپتال کو حالیہ برسوں میں مالی امداد کے بحران کا سامنا کرنا پڑا ہے، کیونکہ نقدی کی تنگی کا شکار فلسطینی اتھارٹی فلسطینیوں کے لیے جدید علاج کی ادائیگی کے لیے جدوجہد کر رہی ہے۔ مئی میں امریکی قانون سازوں کو بھیجے گئے ایک خط کے مطابق آگسٹا وکٹوریہ ہسپتال 2021 سے ہی شدید قرضوں میں ڈوبا ہوا ہے، جس میں پی اے کی طرف سے 70 ملین ڈالر سے زیادہ کا واجب الادا تھا۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: