உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Ukraine: یوکرین کو راکٹ سسٹم سمیت 270 ملین ڈالر کی فوجی امداد جاری، امریکہ نے اٹھایا بڑا قدم

    امریکی کی جانب سے یوکرین کو فوجی مدد

    امریکی کی جانب سے یوکرین کو فوجی مدد

    امریکی صدر جو بائیڈن نے واضح کیا ہے کہ ہم یوکرین کی حکومت اور اس کے عوام کی حمایت جاری رکھیں گے جب تک اس میں وقت لگے گا۔ تازہ امداد سے یوکرین کو بھیجے گئے M142 ہائی موبلٹی آرٹلری راکٹ سسٹمز کی تعداد 20 ہو جائے گی، جسے ہیمارز کہا جاتا ہے۔

    • Share this:
      امریکہ (United States) نے جمعہ کے روز یوکرین (Ukraine) کے لیے مزید 270 ملین ڈالر کی فوجی امداد پر دستخط کیے ہیں جن میں چار نئے ہمارس پریسیئن راکٹ سسٹم (Himars precision rocket systems) بھی شامل ہیں۔ وائٹ ہاؤس کے ترجمان جان کربی نے نامہ نگاروں کو بتایا کہ روس نے ملک بھر میں مہلک حملے شروع کیے ہیں۔ اس دوران اس نے مالز، اپارٹمنٹ کی عمارتوں پر حملے کیے ہیں اور بے گناہ یوکرائنی شہریوں کو ہلاک کیا ہے۔

      انہوں نے کہا کہ ان مظالم کے پیش نظر امریکی صدر جو بائیڈن نے واضح کیا ہے کہ ہم یوکرین کی حکومت اور اس کے عوام کی حمایت جاری رکھیں گے جب تک اس میں وقت لگے گا۔ تازہ امداد سے یوکرین کو بھیجے گئے M142 ہائی موبلٹی آرٹلری راکٹ سسٹمز کی تعداد 20 ہو جائے گی، جسے ہیمارز کہا جاتا ہے۔ جو 80 کلومیٹر (50 میل) کے اندر اہداف کو ٹھیک ٹھیک نشانہ بنا سکتا ہے۔ جو روس کا مقابلہ کرنے میں ایک گیم چینجر ہے۔

      مزید پڑھیں:

      کربی نے کہا کہ تازہ امداد میں 500 نئے فینکس گھوسٹ، چھوٹے اور انتہائی پورٹیبل ڈرون بھی شامل ہوں گے جو اپنے اہداف پر دھماکہ کرتے ہیں۔ تازہ ترین امداد میں آرٹلری گولہ بارود کے 36,000 راؤنڈ بھی شامل ہیں۔

      مزید پڑھیں: 


      یوکرین کے وزیر دفاع اولیکسی ریزنکوف نے اس ہفتے کے شروع میں امید ظاہر کی کہ امریکہ زیادہ سے زیادہ 100 ہیمارس یونٹ فراہم کرے گا، یہ کہتے ہوئے کہ وہ روسی حملہ آوروں کے خلاف لہر کا رخ موڑ سکتے ہیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: