ہندوستان سے تلخی کے بیچ اب پاکستان کو لے کر امریکہ نے اٹھایا ایسا قدم

پاکستان نے نہ صرف ہندوستان کے ساتھ سفارتی رشتے ختم کر لئے ہیں بلکہ دونوں ملکوں کے درمیان چلنے والی سمجھوتہ ایکسپریس کو بھی روک دیا ہے۔ اسی درمیان امریکہ نے بھی ایک ایسا قدم اٹھایا ہے جسے پاکستان کے لئے راحت کی بات کہی جا سکتی ہے۔

Aug 08, 2019 07:00 PM IST | Updated on: Aug 08, 2019 07:06 PM IST
ہندوستان سے تلخی کے بیچ اب پاکستان کو لے کر امریکہ نے اٹھایا ایسا قدم

امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ اور پاکستانی وزیر اعظم عمران خان

جموں وکشمیر میں آرٹیکل 370 ختم کئے جانے کے بعد سے ہی پاکستان بوکھلایا ہوا ہے۔ پاکستان نے نہ صرف ہندوستان کے ساتھ سفارتی رشتے ختم کر لئے ہیں بلکہ دونوں ملکوں کے درمیان چلنے والی سمجھوتہ ایکسپریس کو بھی روک دیا ہے۔ اسی درمیان امریکہ نے بھی ایک ایسا قدم اٹھایا ہے جسے پاکستان کے لئے راحت کی بات کہی جا سکتی ہے۔

دراصل، امریکہ نے پاکستانی سفارت کاروں اور ملازمین کی آمدورفت پر سے پابندی ہٹا لی ہے۔ یعنی پاکستان کے بیرون ملک خدمات کے افسران اور ملازمین امریکہ میں کہیں بھی آ جا سکتے ہیں۔

Loading...

امریکہ نے پاکستانی سفارت کاروں اور ان کے ملازمین کے لئے یہ ضابطہ نافذ کیا تھا کہ جس شہر میں ان کی تعیناتی ہے وہاں سے 25 میل دور بغیر اجازت کے وہ نہیں جا سکتے۔ پچھلے سال جب امریکہ نے ان پر یہ سختی کی تھی تو پاکستان نے بھی فوری طور پر امریکی افسران کے لئے یہی ضابطہ پاکستان میں بھی نافذ کر دیا تھا۔

امریکہ نے پاکستان پر یہ پابندی پچھلے سال لگائی تھی۔ فی الحال اس خبر کو پاکستانی اخبار ڈان نے شائع کیا ہے۔ ڈان کی رپورٹ کے مطابق، اب اسلام آباد نے بھی پاکستان میں امریکی سفارت کاروں کی سہولتیں بحال کر دی ہیں۔ حالانکہ، پاکستان کے محکمہ خارجہ نے اس معاملہ پر کوئی تبصرہ نہیں کیا ہے۔ مانا جا رہا ہے کہ پاکستانی وزیر اعظم کے دورہ امریکہ کے بعد ٹرمپ نے نرمی دکھانے کے لئے یہ حکم دیا ہے۔

Loading...