உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Russia-Ukraine War: کیا کیو پر ہوچکا ہے روس کا قبضہ؟ روسی میڈیا نے جاری کیا یہ ویڈیو

    کیا کیو پر ہوچکا ہے روس کا قبضہ؟ روسی میڈیا نے جاری کیا یہ ویڈیو

    کیا کیو پر ہوچکا ہے روس کا قبضہ؟ روسی میڈیا نے جاری کیا یہ ویڈیو

    Russia-Ukraine War: یوکرین کی راجدھانی کیو اور دوسرے سب سے بڑے شہر کھارکیو میں روسی فوج بڑی تعداد میں پہنچ چکی ہے۔ کھارکیو میں گزشتہ دو دنوں سے مسلسل گولہ باری جاری ہے۔ ایسے میں کھارکیو چھوڑ کر جا رہے لوگ پولینڈ اور ہنگری میں پناہ لے رہے ہیں۔ ہندوستان نے بھی اپنے شہریوں کو جلد از جلد کھارکیو چھوڑنے کے احکامات دیئے ہیں۔

    • Share this:
      کیو: یوکرین میں روس کے جنگ چھیڑنے (Russia-Ukraine War) کے تقریباً 8 دن بعد راجدھانی کیو پر روسی فوج اپنا کنٹرول (Russian Contron on Kyiv) قائم کرتی ہوئی نظر آرہی ہے۔ روسی وزارت دفاع نے روسی فوج اور فوجی گاڑیوں کے قافلے کا ایک ویڈیو جاری کیا ہے۔ روس کے سرکاری میڈیا ادارے آرٹی آئی کے ٹوئٹر ہینڈل پر شیئر کئے گئے اس ویڈیو میں کیو میں روسی فوجی گاڑیوں کے لمبے قافلے، ٹینکر، ہیلی کاپٹر اور بختر بند گاڑی دکھائی پڑ رہے ہیں۔ ویڈیو میں یوکرین کی تباہی کا منظر بھی صاف دیکھا جاسکتا ہے۔ جہاں تباہ شدہ عمارتیں،  تباہ شدہ فوجی ٹینکرز صاف دکھائی دے رہے ہیں۔ اس ویڈیو میں کئی روسی فوجی بھی نظر آ رہے ہیں۔

      یوکرین کی راجدھانی کیو اور دوسرے سب سے بڑے شہر کھارکیو میں روسی فوج بڑی تعداد میں پہنچ چکی ہے۔ کھارکیو میں گزشتہ دو دنوں سے مسلسل گولہ باری (Shelling in Kharkyiv) جاری ہے۔ ایسے میں کھارکیو چھوڑ کر جا رہے لوگ پولینڈ اور ہنگری میں پناہ لے رہے ہیں۔ ہندوستان نے بھی اپنے شہریوں کو جلد از جلد کھارکیو چھوڑنے کے احکامات دیئے ہیں۔



      پڑوسی ممالک میں پناہ لے رہے کمزور یوکرینی شہری

      نقل مکانی کر رہے یوکرین کے کچھ سب سے کمزور شہریوں کے لئے اتحاد، ہمدردی کے ساتھ پولینڈ اور ہنگری کے باشندے ان کا کھلے دل سے استقبال کر رہے ہیں اور جنگ کے وقت بھی انسانیت کو زندہ رکھے ہوئے ہیں۔ ہنگری کے جاہونی اسٹیشن پر بدھ کو ایک ٹرین پہنچی، جس میں جسمانی اور ذہنی طور پر معذور تقریباً 200 لوگ سوار تھے۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      کیا امریکہ کو کھٹک رہی ہے ہندوستان-روس کی دوستی؟ یوکرین بحران کی آڑ میں US نے دیا بڑا بیان

      بدھ کو ہنگری کے جہونی اسٹیشن پر ایک ٹرین پہنچی جس میں تقریباً 200 افراد جسمانی اور ذہنی طور پر معذور تھے۔ روسی حملے کی وجہ سے یوکرین کے دارالحکومت کیو میں معذوروں کے لئے بنے دو یتیم خانوں میں رہنے والے لوگ اس ٹرین کے ذریعہ ہنگری پہنچے۔

      یتیم خانہ کے ڈائریکٹر نے بتایا کیو کا منظر
      "کیو میں لڑکوں کے لئے بنے یتیم خانہ کی ڈائریکٹر لاریسا لیونیڈونا نے کہا، ’یتیم خانہ کے قریب میٹرو اسٹیشن کو دھماکے سے اڑا دیا گیا۔ بمباری کے دوران ہم ایک گھنٹے سے زیادہ بنکر میں رہے‘۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: