ہوم » نیوز » عالمی منظر

نیپال میں پرتشدد ہوا مدھیشی آندولن، زندہ جلائے گئے 37 پولیس اہلکار

کھٹمنڈو۔ نیپال میں ایک دل دہلا دینے والا واقعہ ہوا ہے۔ یہاں مظاہرین نے ایس ایس پی سمیت 37 پولیس اہلکاروں کو زندہ جلا دیا ہے۔

  • Share this:
نیپال میں پرتشدد ہوا مدھیشی آندولن، زندہ جلائے گئے 37 پولیس اہلکار
کھٹمنڈو۔ نیپال میں ایک دل دہلا دینے والا واقعہ ہوا ہے۔ یہاں مظاہرین نے ایس ایس پی سمیت 37 پولیس اہلکاروں کو زندہ جلا دیا ہے۔

کھٹمنڈو۔ نیپال میں ایک دل دہلا دینے والا واقعہ ہوا ہے۔ یہاں مظاہرین نے ایس ایس پی سمیت 37 پولیس اہلکاروں کو زندہ جلا دیا ہے۔ مدھیشی مظاہرین نے گورا شہر پر قبضہ کر لیا ہے۔

مغربی نیپال میں گزشتہ 10 دنوں سے مسلسل مدھیشی نئے آئین کی مخالفت میں مظاہرہ کر رہے ہیں۔ پیر کو یہ مظاہرہ مزید پر تشدد ہو گیا۔

تقریبا 20000 مظاہرین نے پولیس اور مسلح دستوں کو زندہ جلا دیا۔ وزارت داخلہ کے ترجمان نے بتایا کہ کیلالی ضلع کے ٹيكاپور میں مظاہرین نے پولیس پر حملہ بول دیا۔

نئے آئین کے تحت نیپال 7 صوبوں میں تقسیم کیا جائے گا۔ ٹيكاپور میں مظاہرین نے ایس ایس پی سمیت 8 پولیس اہلکاروں کو جلا دیا۔ ترجمان کے مطابق ہلاکتوں کی تعداد اور بڑھ سکتی ہے۔ نیپال کی پارلیمنٹ میں کل وفاقی ریاست کو 7 حصوں میں بانٹنے کا التزام رکھا گیا تھا۔ مظاہرین کا کہنا ہے کہ اس سے ان کا حق مارا جائے گا۔ نیپال پولیس کے ہیڈ کوارٹر پر ڈپٹی آئی جی ہیمنتا پال نے بتایا کہ مرنے والوں میں سیتی کے علاقائی پولیس کے سربراہ لکشمن نيوپن، دو انسپکٹر کیشو بوهارا اور بلرام بستا، ایک ہیڈ کانسٹیبل اور ایک کانسٹیبل بھی شامل ہیں۔ آرمڈ پولیس فورس کے چھ سیکورٹی بھی تشدد میں مارے گئے ہیں۔ ان میں رام بير تھارو نام کے ہیڈ کانسٹیبل بھی شامل ہیں۔ حالات اس وقت بے قابو ہو گئے جب مظاہرین نے کرفیو توڑنے کی کوشش کی۔ قومی سلامتی کونسل کے اجلاس میں فیصلہ لیا گیا کہ تشدد پر قابو پانے کے لئے فوج تعینات کی جائے۔ وزیر داخلہ بامدیو گوتم نے پارلیمنٹ کو بتایا کہ مقامی انتظامیہ کی درخواست پر حکومت نے فوج تعینات کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ گوتم نے کہا کہ پورا تشدد منظم لگ رہا ہے۔ ہیڈ کانسٹیبل تھارو کو زندہ جلا دیا گیا۔ سینئر پولیس سپرنٹنڈنٹ نيوپن کو بھالے سے گود كر مار ڈالا گیا۔ سیکورٹی اہلکاروں پر چاروں طرف سے گھیر کر حملہ کیا گیا۔ انہیں بھالے اور چاقو سے مارا گیا۔ علاقے میں کشیدگی برقرار ہے۔ سیکورٹی اہلکاروں اور مظاہرین کے درمیان رہ رہ کر تشدد کی خبریں آ رہی ہیں۔ روتاہاٹ اور سپتری اضلاع میں بھی تشدد کی خبر ہے۔
First published: Aug 24, 2015 10:09 PM IST