ہوم » نیوز » عالمی منظر

جو بائیڈن کے صدر بننے کے بعد وہائٹ ہاوس کا بیان، کہا- ہندوستان کے ساتھ ہمارے رشتے ہوں مزید مضبوط

وہائٹ ہاوس (White House) نے کہا ہے کہ جو بائیڈن (Joe Biden) اور کملا ہیرس (Kamala Harris) کی وجہ سے ہندوستان - امریکہ کے درمیان تعلقات مزید مضبوط ہوں گے۔ وہائٹ ہاوس کی پریس سکریٹری جین ساکی نے کہا کہ صدر جو بائیڈن دونوں ممالک کے درمیان لمبے وقت سے چل رہے دو طرفہ کامیاب تعلقات کا احترام کرتے ہیں۔

  • Share this:
جو بائیڈن کے صدر بننے کے بعد وہائٹ ہاوس کا بیان، کہا- ہندوستان کے ساتھ ہمارے رشتے ہوں مزید مضبوط
جو بائیڈن کے صدر بننے کے بعد وہائٹ ہاوس کا ہندوستان سے تعلقات سے متعلق بڑا بیان

واشنگٹن: امریکہ میں جو بائیڈن نے نئے صدر اور کملا ہیرس نے نائب صدر کے طور پر کام کاج سنبھال لیا ہے۔ اس درمیان وہائٹ ہاوس (White House) نے کہا ہے کہ جو بائیڈن (Joe Biden) اور کملا ہیرس (Kamala Harris) کی وجہ سے ہندوستان - امریکہ کے درمیان تعلقات مزید مضبوط ہوں گے۔ وہائٹ ہاوس کی پریس سکریٹری جین ساکی نے کہا کہ صدر جو بائیڈن دونوں ممالک کے درمیان لمبے وقت سے چل رہے دو طرفہ کامیاب تعلقات کا احترام کرتے ہیں۔ جو بائیڈن نے بدھ کو امریکہ کے ویں صدر کے طور پر حلف لیا۔


جو بائیڈن میں ہندوستان - امریکہ تعلقات پر ایک سوال کے جواب میں ساکی نے کہا، ’صدر جو بائیڈن کئی بار ہندوستان کا سفر کرچکے ہیں۔ وہ ہندوستان اور امریکہ میں لیڈرروں کے درمیان لمبے وقت سے چلے آرہے کامیاب دوطرفہ تعلقات کا احترام کرتے ہیں، اس کی اہمیت کو سمجھتے ہیں۔ جو بائیڈن انتظامیہ اسے آگے بڑھانے کی سمت میں پُرامید ہے‘۔


انہوں نے کہا کہ ہندوستانی نژاد کملا ہیرس کے نائب صدر بننے سے یہ تعلقات مزید مضبوط ہوں گے۔ ساکی نے کہا، ’جو بائیڈن نے اس کا (ہیرس کا) انتخاب کیا ہے اور وہ پہلی ہندوستانی نژاد ہیں، جو امریکہ کی نائب صدر بنی ہیں۔ یقینی طور پر یہ اس ملک میں ہم سبھی کے لئے نہ صرف ایک تاریخی لمحہ ہے بلکہ اس سے ہمارے رشتے بھی مزید مضبوط ہوں گے‘۔


ایمیگریشن ریفارم بل کیا پیش، ہندوستانیوں کو ہوگا فائدہ

اس سے پہلے امریکہ کے صدر جو بائیڈن نے عہدہ سنبھالنے کے بعد پہلے دن کانگریس کو ایک جامع امیگریشن بل بھیجا۔ اس بل میں امیگریشن سے متعلق نظام میں اہم ترمیم کئے جانے کی تجویز ہے۔ ’یو ایس سٹیزن شپ ایکٹ آف 2021’ میں ایمیگریشن سسٹم کو بہتر بنایا گیا ہے۔ اس بل کے ذریعہ ہزاروں کی تعداد میں تارکین وطن اور دیگر گروپوں کو شہریت ملنے کا راستہ صاف ہوگا اور امریکہ کے باہر گرین کارڈ کے لئے فیملی کے اراکین کو کم وقت تک انتظار کرنا پڑے گا۔ اس بل میں ایمیگریشن سسٹم کی جدید کاری اور روزگار پر مبنی گرین کارڈ کے لئے ہر ملک مقرر کردہ حد کو ختم کرنے کا بھی اس میں التزام کیا گیا ہے۔ اس سے امریکہ میں ہزاروں ہندوستانی آئی ٹی پیشہ وروں کو فائدہ ہوگا۔ وہائٹ ہاوس نے کہا کہ یہ بل امریکہ کی معیشت کی حوصلہ افزائی کرے گا اور یہ یقینی بنائے گا کہ ہر ایک ملازم محفوظ ہو۔ یہ بل تارکین وطن پڑوسیوں، ملازمین، معاونین، طبقے کے لیڈروں،اور دوستوں کی شہریت کے لئے ایک راستہ بنتا ہے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Jan 22, 2021 10:36 AM IST