உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Omicron سے بچاؤ کیلئے کورونا ویکسین میں بدلاو کی ضرورت، WHO کے ٹیکنیکل گروپ کا مشورہ

    Omicron سے بچاو کیلئے کورونا ویکسین میں بدلاو کی ضرورت، WHO کے ٹیکنیکل گروپ کا مشورہ

    Omicron سے بچاو کیلئے کورونا ویکسین میں بدلاو کی ضرورت، WHO کے ٹیکنیکل گروپ کا مشورہ

    WHO says COVID-19 vaccines may need to be updated for Omicron : دنیا بھر میں اومیکران ویریئنٹ (Omicron Variant) کے بڑھتے انفیکشن اور خوف کے درمیان عالمی صحت تنظیم (World Health Organization) نے کہا ہے کہ اس ویرئنٹ سے بچاو کیلئے کورونا وائرس ویکسین (Covid-19 Vaccine) کو اپ ڈیٹ کرنے کی ضرورت ہے ۔

    • Share this:
      جنیو : دنیا بھر میں اومیکران ویریئنٹ  (Omicron Variant) کے بڑھتے انفیکشن اور خوف کے درمیان عالمی صحت تنظیم (World Health Organization)  نے کہا ہے کہ اس ویرئنٹ سے بچاو کیلئے کورونا وائرس ویکسین (Covid-19 Vaccine)  کو اپ ڈیٹ کرنے کی ضرورت ہے ۔ ڈبلیو ایچ او کے ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ نے منگل کو یہ مشورہ دیا ہے ۔ اس تکنیکی گروپ کا کہنا ہے کہ اومیکران جیسے ویریئنٹ سے لڑنے کیلئے موجودہ کورونا ویکسین میں بدلاو کی ضرورت پڑ سکتی ہے ۔

      ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ نے کہا کہ موجودہ کورونا ویکسین کے کمپوزیشن میں تبدیلی کی ضرورت ہوسکتی ہے تاکہ یہ یقینی بنایا جاسکے کہ یہ ویکسین کورونا وائرس کے اومیکران اور مستقبل میں دیگر سبھی ویرئنٹس کے خلاف کارگر ہو ۔ اس گروپ میں شامل انڈیپنڈنٹ ایکسپرٹس نے یہ بیان جاری کیا ہے اور اس کو سبھی میڈیا و صحافیوں کو بھیجا گیا ہے ۔

      بتادیں کہ ساوتھ افریقہ میں پچھلے سال نومبر میں اومیکران ویریئنٹ کی شناخت ہونے کے بعد سے یہ ویریئنٹ تیزی سے پھیلا اور دنیا بھر میں اس نے لاکھوں لوگوں کو متاثر کیا ۔ اس ویریئنٹ نے ویکسین لینے والے لوگوں کو بھی پھر سے متاثر کیا ۔ اس کے بعد یہ سوال اٹھنے لگے کہ کیا موجودہ کورونا ویکسین اومیکران ویریئنٹ کے خلاف کارگر ہے ۔

      کئی سائنسی ریسرچ میں یہ کہا گیا ہے کہ اس ویریئنٹ سے بچاو کیلئے ویکسین کے بوسٹر ڈوز کی ضرورت ہوگی ۔ وہیں کچھ ریسرچ میں یہ پایا گیا ہے کہ موجودہ ویکسین میں تبدیلی کرنے کی ضرورت ہے تاکہ یہ اومیکران ویرینٹ کے خلاف کارگر ہو ۔

      برطانیہ اور امریکہ سمیت کئی مغربی ممالک میں اومیکران ویریئنٹ کی وجہ سے کورونا انفیکشن کے معاملات میں تیزی آئی ہے ۔ ان میں یوروپی ممالک اور امریکہ میں کورونا 19 کے کیس میں زبردست اچھال آیا ہے ۔ وہیں ہندوستان میں بھی دہلی اور ممبئی میں اومیکران ویریئنٹ کے سب سے زیادہ معاملات دیکھنے کو ملے ہیں ۔ جس کی وجہ سے ملک کی الگ الگ ریاستوں میں کورونا وائرس کے معاملات تیزی سے بڑھے ہیں ۔

      عالمی صحت تنظیم نے کورونا انفیکشن سے بچاو کیلئے ویکسین ، ماسک اور سماجی فاصلہ پر عمل کرنے پر وزر دیا ہے ۔ وہیں کئی ممالک نے انفیکشن کی روک تھام کیلئے کئی طرح کی پابندیوں کو لاگو کیا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: