உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    US Visa: امریکی ویزااپوائنٹمنٹ کیلئے 500 سے زیادہ دن کا انتظار! دیگرممالک کےکیاہیں اصول؟

    طلباء سب سے زیادہ متاثر ہوئے ہیں۔

    طلباء سب سے زیادہ متاثر ہوئے ہیں۔

    ٹائمز آف انڈیا کے مطابق امریکی سفارت خانہ انتظار کے وقت کو کم کرنے پر کام کر رہا ہے۔ میڈیا سے بات کرنے والے ایک اہلکار نے کہا کہ قونصلر عملے میں اضافہ کرکے اور مخصوص قسم کے ویزوں کو ترجیح دے کر انتظار کی مدت کو کم کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔

    • Share this:
      امریکہ ہو یا یورپ کا سفر ہر ایک کے ذہن میں ہوتا ہے۔ کام کے لیے ہو، پڑھائی کے لیے یا یہاں تک کہ تفریح کرنے کے لیے ہندوستانیوں کی ترجیح ہوتی ہے کہ وہ بیروم ممالک جائیں لیکن کیا آپ ان لوگوں میں شامل ہیں جو ویزا حاصل کرنے کے لیے طویل انتظار کے بارے میں سن رہے ہیں؟ اگر ہاں تو آپ اکیلے نہیں ہیں۔ امریکی محکمہ خارجہ کی ویب سائٹ Travel.State.Gov کے مطابق نئی دہلی میں امریکی قونصل خانے میں ویزا اپائنٹمنٹ کا اوسط انتظار وزیٹر ویزے کے لیے 522 دن اور اسٹوڈنٹ ویزا کے لیے 471 دن ہے۔ ممبئی میں بھی امریکی ویزا اپوائنٹمنٹ (US visa appointment) کے لیے اوسط انتظار کا وقت وزیٹر ویزا کے لیے 517 دن اور اسٹوڈنٹ ویزا کے لیے 10 دن ہے۔

      منی کنٹرول کے مطابق امریکی ویزا انٹرویو کے لیے انتظار کرنے والے درخواست دہندگان کی تعداد اب 4 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے۔ کینیڈا جیسی جگہوں کے لیے بھی یہ کہانی مختلف نہیں ہے جہاں 20 لاکھ سے زیادہ کا بیک لاگ نظر آ رہا ہے۔ شینگن ویزا بھی برطانیہ کے سفر کے لیے ویزا کے انتظار کے وقت کے ساتھ تاخیر کا شکار ہے۔ منی کنٹرول کی رپورٹ کے مطابق فرانس اور آئس لینڈ سمیت ممالک کے لیے ویزا اپائنٹمنٹ کے لیے کوئی سلاٹ نہیں ہے۔

      ٹائمز آف انڈیا کے مطابق امریکی سفارت خانہ انتظار کے وقت کو کم کرنے پر کام کر رہا ہے۔ میڈیا سے بات کرنے والے ایک اہلکار نے کہا کہ قونصلر عملے میں اضافہ کرکے اور مخصوص قسم کے ویزوں کو ترجیح دے کر انتظار کی مدت کو کم کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ عہدیدار نے تاخیر کی وجہ کووڈ وبائی بیماری کو قرار دیا۔ دیگر سفارت خانوں نے بھی طویل انتظار کے وقت کو تسلیم کیا، لیکن کہا کہ درخواستوں میں اضافہ وبائی مرض کورونا وائرس کے بعد دیے گئے ویزوں کی تعداد کے متناسب ہے۔

      یہ بھی پڑھحیں: 


      کینیڈین ہائی کمیشن کے ترجمان کے حوالے سے بتایا گیا کہ کورونا وبا کے باوجود کینیڈا کی حکومت نے 2021 میں 4 لاکھ سے زیادہ نئے مستقل باشندوں کا خیرمقدم کیا جن میں سے 32 فیصد ہندوستانی ہیں۔ جب کہ کئی ممالک سفر میں وبا کے بعد ہونے والے اضافے کا مقابلہ کر رہے ہیں۔ لوگ متبادل سفری منصوبوں کا انتخاب کر رہے ہیں، لیکن وہ لوگ جو اپنے ویزے پر انحصار کرتے ہیں جیسے کہ طلباء سب سے زیادہ متاثر ہوئے ہیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: