ہوم » نیوز » عالمی منظر

بھیانک خبر، اڑجائیں گے ہوش: دوستوں کو مارکرکھانے والا 51 سال کا آدم خور گرفتار

روس میں اس واقعے کے سامنے آنے کے بعد سے لوگ حیرت میں ہیں۔ اس معاملے مییں روسی پولیس نے 51 سال کے اس مشتبہ کو گرفتار کرلیا ہے۔

  • Share this:
بھیانک خبر، اڑجائیں گے ہوش: دوستوں کو مارکرکھانے والا 51 سال کا آدم خور گرفتار
علامتی تصویر

جرم کا ایک بھیانک واقعہ سامنے آیا ہے جس میں پولیس نے ایسے شخص کو گرفتار کیا ہے جواپنے دوستوں کو مارکر ان کے جسم کے حصوں کو کھا گیا تھا۔

پولیس کی شروعاتی جانچ میں سامنے آیا ہے کہ یہ شخص اپنے دوستوں کو مارنے سے پہلے جم کر شراب پلاتا تھا۔ اس طرح سے اس شخص نے اپنے تین دوستوں کو مارا۔ پولیس نے بتایا کہ مارنے سے پہلے شراب پلانے کے دوران جب اس شخص کے تینوں دوست شراب کے نشے میں چور ہوگئے تو اس نے ان تینوں کا چاقوسے قتل کردیا۔

پولیس کو جانوروں ۔پرندوں کے قتک کا بھی ہےشک

اس شخص کی بربریت بس یہیں تک ہی نہیں رکی اس نے اپنے دوستوں کی لاشوں کو منتشر کردیا۔ ان کاٹے گئے حصوں کو اس شخص نے کھایا بھی۔ پولیس نے اس معاملے میں اس شخص کے تینوں دوستوں کی لاشوں کو برآمد کرلیا ہے۔

ایک ڈرانے والی بات یہ بھی ہے کہ جس ندی سے ان لاشوں کی باقیات کو برآمد کیا گیا ہے وہاں پرکتے، بلیاں اور کچھ پرندوں کی لاشیں بھی ملی ہیں۔ اس سے پولیس کو یہ بھی شک ہو رہا ہے کہ  ان جانوروں اور پرندوں کا قتل بھی اسی شخص نے کیا ہوگا۔

لاشوں کو کھانے کے بعد ندی میں بہایا
روس میں اس واقعے کے سامنے آنے کے بعد سے لوگ حیرت میں ہیں۔ اس معاملے مییں روسی پولیس نے 51 سال کے اس مشتبہ کو گرفتار کرلیا ہے۔ اس معاملے میں جانچ میں لگی کمیٹی نے کہا ہے کہ کھانے سے پہلے شخص نے لاشوں کے کئی ٹکڑے بھی کئے تھے۔ پولیس نے بتایا کہ لاشوں کو کھانے کے بعد  بچے ہوئے باقیات کو اس شخص نے ندی میں بہا دیا تھا۔ پولیس کے مطابق اس شخص نے قتل کے ان واقعات کو 2016 ،2017 کے درمیان انجام دیا تھا۔
اس وحشی شخص کا اعتماد اتنا مضبوط تھا کہ اس نے جن  تین لوگوں کا قتل کیا تھا اس میں سے ایک کے گھر رہ رہا تھا۔ اس شخص نے اپنے اس دوست کے اہل خانہ کو بتا رکھا تھا کہ ان کا بیٹا کام کے سلسلے میں دوسرے شہر گیا ہوا ہے اور انہوں نے پولیس سے شکایت کی تو اس نے پولیس کو بھی گمراہ کرنے کی کوشش کی۔ اس نے اسے بھی یہی بتایا کہ اس کا دوست کسی دوسری جگہ پر گیا ہوا ہے۔
بہت مشکل  سے کی جا سکی لاشوں کی پہچان۔۔۔۔
اس لڑکے کے دیگر دو دوستوں کے کوئی رشتے دار نہیں تھے اس لئے کسی نے ان کی جانکاری نہیں لی۔ پولیس نے بتایا کہ لاش کے جو باقیات برآمد کئے گئے ہیں ان کی پہچان کرنا بھی بہت مشکل تھا لیکن بعد میں سائنسی طریقے سے ان کی شناخت کر لی گئی۔ پولیس نے ملزم کی پہچان بتانے سے بھی انکار کیا ہے۔
پولیس نے بتایا کہ لاشوں کی پہچان کرنے کیلئے ان کا میڈیکل ٹیسٹ کرنا پڑا۔ پولیس نے کہا ہے کہ اس معاملے میں پولیس مسلسل ملزم کے خلاف ثبوت جٹانے میں مصروف ہے۔ ملزم کو فی الحال جیل میں رکھا گیا ہے۔ پولیس نے کہا ہے کہ جانچ پوری ہونے کے بعد اس کے خلاف الگ۔الگ دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا جائے گا۔
First published: Oct 31, 2019 12:59 PM IST