ہوم » نیوز » عالمی منظر

رپورٹ میں ہوا یہ سنسنی خیز انکشاف: 629 پاکستانی لڑکیوں کو دلہن بتا کر چین کو بیچا گیا

نیوز ایجنسی اے پی نے اس سے جڑے دستاویز حاصل کئے ہیں جسے پاکستانی تفتیش کاروں نے تیار کیا ہے۔

  • Share this:
رپورٹ میں ہوا یہ سنسنی خیز انکشاف: 629 پاکستانی لڑکیوں کو دلہن بتا کر چین کو بیچا گیا
تصویر: اے پی

کئی صفحات کے دستاویزوں میں صرف 629 خواتین کے نام درج ہیں۔ ان خواتین کو پاکستان کے الگ۔الگ حصوں سے چین کے لوگوں کو دلہن کے طور پر بیچا گیا۔ نیوز ایجنسی اے پی نے اس سے جڑے دستاویز حاصل کئے ہیں جسے پاکستانی تفتیش کاروں نے تیار کیا ہے۔ یہ تفتیش کار پاکستان میں غریب لوگوں کا استحصال کرنےوالے جسم فروشی کے نیٹ ورک کو توڑنے کیلئے کام کر رہے ہیں۔

یہ پاکستان سے چین میں 2018 سے ہوئے جسم فروشی کے سب سے قابل اعتماد اعدادوشمارہیں۔ لیکن پاکستانی حکومت نے جسم فروشی کے کاروبار کو روکنے کی سرکاری کوششوں میں جاری تیزی کو جون 2018 سے روک دیا ہے۔ کہاجا رہا ہے کہ ایسی کوششوں سے پاکستان کو چین سے اپنے اقتصادی منافع کے نقصان کا ڈر ہے۔

"<br پاکستان میں اسمگلر وں کے خلاف آیا سب سے بڑا معاملہ بند ہوچکا ہے۔ اکتوبر میں فیصل آباد کی ایک کورٹ نے 31 چینی شہریوں کو اسمگلنگ کے الزاموں سے بری کردیا تھا۔ اس میں برآمد ہوئی کئی خواتین نے پولیس کی پوچھ۔گچھ میں کوئی بھی گواہی دینے سے منع کردیا تھا۔ اس کیس سے جڑے رہے ایک کورٹ کے افسر اور ایک پولیس آفیسر بتاتے ہیں کہ ایسا اس لئے ہوا کیونکہ ان خواتین کو چپ رہنے کی یا تو دھمکی دی گئی تھی یا انہیں اس کیلئے پیسے دئے گئے تھے۔

"<br ایک سینئر افسر نے بتایا کہ یہ فائدے کا دھندا اب بھی جاری ہے۔ نیوز ایجنسی نے آفیسر کا انٹرویو اس کے دفتر سے ہزاروں کلومیٹر دور کیا تاکہ اس کی پہچان چھپی رہے، اس آفیسر نے بتایا چینی اور پاکستانی دلال خرید ار یا مبینہ دلہوں سے چار لاکھ سے 10 لاکھ پاکستانی روپئے یعنی تقریبا 25 یزار سے 65 ہزار امریکی ڈالر لیتے ہیں لیکن لڑکیوں کے اہل خانہ کو صرف 2 لاکھ پاکستانی روپئے ہی دئے جاتے ہیں۔

"<br ستمبر میں پاکستانی جانچ ایجنسی نے جھوٹی چینی شادیوں کے معاملہ کی ایک رپورٹ پاکستان کے پی ایم عمران خان کو بھیجی تھی۔  اس میں 52 چینی شہریوں کے خلاف درج معاملوں کی جانکاری دی گئی ہے۔ ان معاملوں میں سے 20 صرف پاکستان کے دو شہروں  مشرقی پنجاب صوبے کے فیصل آباد اور لاہور کے ہیں۔ یہ دھندا اسلام آباد میں بھی جاری ہے۔ بتا دیں کہ اس فائل میں جن ملزموں کا ذکر تھا اس میں کورٹ کے ذریعے چھوڑے گئے31 چینی شہری بھی شامل تھے۔ حکومت اور انتظامیہ ان معاملوں کو دبانے میں مصروف ہے۔

First published: Dec 05, 2019 12:46 PM IST