ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

بانڈی پورہ میں ڈریجنگ کے کام سے منسلک 18 مزدور پائے گئے کورونا مثبت، ولر میں ڈریجنگ کا کام روک دیا گیا

بانڈی پورہ میں واقع ایشیا کی سب سے بڑی اور شہرہ آفاق جھیل جھیل ولر کی شان رفتہ بحال کرنے کا کام بھی کورونا وائرس کی نظر ہوگیا ہے۔ کیونکہ ولر کے اندر کام کر رہے 18 غیر ریاستی مزدور کورونا وائرس سے متاثر پائے گئے ہیں، جس کے بعد ولر میں جاری ڈریجنگ کا کام فی الحال روک دیا گیا ہے۔

  • Share this:
بانڈی پورہ میں ڈریجنگ کے کام سے منسلک 18 مزدور پائے گئے کورونا مثبت، ولر میں ڈریجنگ کا کام روک دیا گیا
بانڈی پورہ میں ڈریجنگ کے کام سے منسلک 18 مزدور پائے گئے کورونا مثبت، ولر میں ڈریجنگ کا کام روک دیا گیا

بانڈی پورہ: جموں وکشمیر کے بانڈی پورہ میں واقع ایشیا کی سب سے بڑی اور شہرہ آفاق جھیل  جھیل ولر کی شان رفتہ بحال کرنے کا کام بھی کورونا وائرس کی نظر ہوگیا ہے۔ کیونکہ ولر کے اندر کام کر رہے 18 غیر ریاستی مزدور کورونا وائرس سے متاثر پائے گئے ہیں، جس کے بعد ولر میں جاری ڈریجنگ کا کام فی الحال روک دیا گیا ہے۔ واضح رہے جھیل کی شان رفتہ بحال کرنےکے لئے اس سال 7 مئی سے ولرکی ہائی ٹیک ڈریجنگ شروع کی گئی تھی اور پہلی بار ولر میں ڈریجنگ کی کہی مشینیں کام پر لگا دی گئی تھیں اور اسی وجہ سے غیر ریاستی مزدوروں کی ایک بڑی تعداد ولر میں ڈریجنگ کے ساتھ جُڑ چکی تھی۔


تاہم سیمپلنگ کرنے کے بعد 18 غیر ریاستی مزدور وائرس سے متاثر پائےگئے اور اس کے بعد ولر میں ڈریجنگ کا عمل روک دیا گیا۔ ادھر انتظامیہ کے ایک افسر نے نیوز 18 اردو سے بات کرتے ہوئےکہا کہ ولر میں جاری کام کو فی الحال روک دیا گیا ہے اور تمام مزدوروں کے نمونے جانچ کےلئےحاصل کئے گئے ہیں اور رپورٹ آنےکے بعد ہی ولر میں کام کی بحالی کو لے کر سوچا جاسکتا ہے۔ یہاں ہے بات قابل ذکر ہےکہ ولرکی ڈریجنگ کےلئے اس وقت تقریباً ڈیڑھ ارب روپئے خرچ کئے جارہے ہیں اور مرکزی حکومت ولر پر جاری کام پر خاص توجہ دے رہی ہے۔


بانڈی پورہ میں واقع ایشیا کی سب سے بڈی اور شہرہ آفاق جھیل جھیل ولر کی شان رفتہ بحال کرنے کا کام کر رہے 18 غیر ریاستی مزدور کورونا وائرس سے متاثر پائے گئے ہیں۔
بانڈی پورہ میں واقع ایشیا کی سب سے بڈی اور شہرہ آفاق جھیل جھیل ولر کی شان رفتہ بحال کرنے کا کام کر رہے 18 غیر ریاستی مزدور کورونا وائرس سے متاثر پائے گئے ہیں۔


یہاں اس بات کا ذکر کرنا بھی ضروری ہےکہ بانڈی پورہ قصبے میں پچھلے دو روز کے دوران 40 غیر ریاستی مزدور وائرس سے متاثر پائے گئے تھے، جس کے بعد بانڈی پورہ کے دیگر مقامات پر کام کر رہے غیر ریاستی مزدوروں کی ماس سیمپلنگ کی گئی اور اسی دوران ولر میں کام کر رہے 18 غیر ریاستی مزدوروں کو وائرس سے متاثر پایا گیا۔ اب جبکہ اس وائرس کی وجہ سے ولرکا کام بھی متاثر ہوا ہے۔ دیکھنے والی بات یہ ہوگی کہ مثبت پائے گئے مزدور کب تک اس وائرس سے پاک ہوجائیں گے تاکہ ولر پر جاری کام آگے بڑھ سکے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Aug 11, 2020 11:38 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading