உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Jammu Kashmir: پونچھ میں دہشت گردوں کے ساتھ تصادم میں فوج کے دو جوان شدید طور پر زخمی، ہائی وے بند کردیا گیا

    Jammu Kashmir: پونچھ میں دہشت گردوں کے ساتھ تصادم میں فوج کے دو جوان شدید طور پر زخمی

    Jammu Kashmir: پونچھ میں دہشت گردوں کے ساتھ تصادم میں فوج کے دو جوان شدید طور پر زخمی

    Jammu Kashmir Latest News: جموں وکمشیر کے پونچھ ضلع میں جمعرات کو دہشت گردوں اور سیکورٹی اہلکاروں کے درمیان انکاونٹر جاری ہے۔

    • Share this:
      سری نگر: جموں وکشمیر کے پونچھ ضلع کے بھٹادھوریان علاقے میں جمعرات کی دیر رات دہشت گردوں کے ساتھ تصادم میں ہندوستانی فوج کے 2 جوان شدید طور پر زخمی ہوگئے ہیں۔ رپورٹس کے مطابق بدھ کی دیر شام فوج کو علاقے میں دہشت گردوں کے چھپے ہونے کی اطلاع ملی تھی، جس کے بعد فوج نے مقامی پولیس کے ساتھ مل کر پورے علاقے کو گھیر لیا اور دہشت گردوں کی تلاش شروع کردی۔

      تلاشی مہم جمعرات کو بھی جاری رہی۔ دیر شام دہشت گردوں نے فوج کے جوانوں پر فائرنگ شروع کردی۔ جوابی کارروائی میں ہندوستانی فوج نے بھی فائرنگ کی۔ دونوں طرف سے کافی دیر تک فائرنگ ہوئی، جس میں فوج کے دو جوان زخمی ہوگئے۔

      حادثہ کے بعد سیکورٹی اہلکاروں نے دہشت گردوں کو گھیرنے کے لئے جموں - راجوری - پونچھ نیشنل ہائی وے کے کچھ حصوں پر آمدورفت کو روک دیا ہے۔ اطلاع کے لئے بتادیں کہ گزشتہ کچھ دنوں میں وادی میں دہشت گردانہ حادثات میں اضافہ ہونے کے بعد فوج کی طرف سے دہشت گردانہ مخالف مہم چلائی جارہی ہے۔ اس مہم کے تحت گزشتہ 6 دنوں میں فوج نے کم از کم 9 دہشت گردوں کو مار گرایا ہے۔

      اس سے قبل پیر کو راجوری سیکٹر کے پیر پنجال رینج میں دہشت گردوں سے مقابلہ کرتے ہوئے پانچ جوان شہید ہوگئے تھے۔ شہیدوں میں ایک جونیئر کمیشنڈ آفیسر اور 4 فوجی شامل تھے۔ حادثہ سے متعلق محکمہ دفاع کے ترجمان نے بتایا تھا کہ گھات لگائے بیٹھے دہشت گردوں نے سیکورٹی اہلکاروں پر جارحانہ فائرنگ کردی تھی، جس کے بعد پانچ جوان زخمی ہوگئے تھے۔ زخمی جوانوں کو اسپتال لے جایا گیا، لیکن ان کو بچایا نہیں جاسکا۔

       

       
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: