ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں وکشمیر کے پلوامہ میں تصادم، دو ملٹینٹ ڈھیر، ایک جوان شہید

بتا دیں کہ دو دن پہلے جموں وکشمیر کے سری نگر کے جادیبل علاقے میں ہوئے تصادم میں تین ملٹینٹ مارے گئے تھے۔

  • Share this:
جموں وکشمیر کے پلوامہ میں تصادم، دو ملٹینٹ ڈھیر، ایک جوان شہید
فائل فوٹو

سری نگر۔ جموں وکشمیر (Jammu-Kashmir) کے پلوامہ (Pulwama) میں منگل کی صبح ایک بار پھر ہندستانی سلامتی دستوں (Indian security force) اور ملٹینٹوں کے درمیان تصادم ہو گیا۔ تصادم میں اب تک دو ملٹینٹ مارے جا چکے ہیں جبکہ ایک ہندستانی نوجوان سنگین طور پر زخمی بتایا جا رہا ہے۔ ہندستانی سلامتی دستوں نے ابھی بھی پورے علاقے کو گھیر رکھا ہے اور سرچ آپریشن جاری ہے۔ خبر ہے کہ ابھی بھی کئی ملٹینٹ علاقے میں چھپے ہوئے ہیں۔



موصولہ اطلاعات کے مطابق، ہندستانی سلامتی دستوں کو خفیہ جانکاری ملی تھی کہ کچھ ملٹینٹ پلوامہ کے بندجو گاوں میں چھپے ہوئے ہیں اور کسی بڑے حملے کی سازش رچ رہے ہیں۔ خفیہ جانکاری کی بنیاد پر سلامتی دستوں نے مقامی پولیس اور سی آر پی ایف کے ساتھ مل کر ایک مشترکہ ٹیم تیار کی اور بندجو گاوں کو گھیر لیا۔ گاوں میں جیسے ہی سرچ آپریشن شروع کیا گیا ویسے ہی ملٹینٹ ایک گھر میں چھپ کر فائرنگ کرنے لگے۔

گولی چلنے کی آواز سنتے ہی ہندستانی جوانوں نے بھی فائرنگ شروع کر دی۔ کافی دیر تک دونوں طرف سے چلی فائرنگ میں دو ملٹینٹوں کو مار گرایا گیا۔ کراس فائرنگ میں سی آر پی ایف کا ایک جوان زخمی ہو گیا۔ زخمی جوان کو اسپتال میں بھرتی کرایا گیا ہے جہاں اس کی حالت سنگین بتائی جا رہی ہے۔ بتا دیں کہ دو دن پہلے جموں وکشمیر کے سری نگر کے جادیبل علاقے میں ہوئے تصادم میں تین ملٹینٹ مارے گئے تھے۔
جموں وکشمیر میں اس سال ملٹینٹوں پر شامت آ چکی ہے۔ بیتے 17 دنوں میں یہاں 32 ملٹینٹ مارے جا چکے ہیں۔ وہیں، اس سال سلامتی دستوں نے کشمیر میں 107 ملٹینٹوں کو مار گرایا ہے۔ خبر ہے کہ ہندستانی سلامتی دستوں نے جنوبی کشمیر میں 125 اور ملٹینٹوں کو مار گرانے کا منصوبہ تیار کیا ہے۔ ان میں 25 غیر ملکی بھی شامل ہیں۔
First published: Jun 23, 2020 07:43 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading