ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

راجوری میں ایل او سی پر جھڑپ، دو پاکستانی دہشت ہلاک اور دو فوجی جوان شہید

جموں میں تعینات دفاعی ترجمان لیفٹیننٹ کرنل دیویندر آنند نے مہلوک فوجیوں کی شناخت نائب صوبیدار سری جیت ایم اور سپاہی ایم جسونت ریڈی کے طور پر کی ہے۔انہوں نے جمعرات کی شام یہاں جاری ایک بیان میں کہا: 'جمعرات کو فوجیوں اور دہشت گردوں کا آمنا سامنا ہوا۔

  • UNI
  • Last Updated: Jul 09, 2021 07:37 AM IST
  • Share this:
راجوری میں ایل او سی پر جھڑپ، دو پاکستانی دہشت  ہلاک اور دو فوجی جوان شہید
دفاعی ترجمان نے کہا کہ جھڑپ کے دوران دو پاکستانی دہشت گرد مارے گئے جن کے قبضے سے دو اے کے 47 رائفلیں اور دیگر اسلحہ و گولہ بارود برآمد کیا گیا ہے۔

جموں و کشمیر کے ضلع راجوری میں لائن آف کنٹرول کے سندربنی سیکٹر میں جمعرات کو ہونے والی ایک جھڑپ کے دوران دو دہشت گرد ہلاک اور دو فوجی جوان شہید ہو گئے ہیں۔جھڑپ کے دوران ایک فوجی اہلکار زخمی ہوا ہے جسے علاج و معالجہ کے لئے فوجی اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔بتایا جا رہا ہے کہ یہ جھڑپ جمعرات کو اُس وقت چھڑ گئی جب دراندازی کرنے والے دہشت گردوں کا فوجیوں سے آمنا سامنا ہوا۔


جموں میں تعینات دفاعی ترجمان لیفٹیننٹ کرنل دیویندر آنند نے مہلوک فوجیوں کی شناخت نائب صوبیدار سری جیت ایم اور سپاہی ایم جسونت ریڈی کے طور پر کی ہے۔انہوں نے جمعرات کی شام یہاں جاری ایک بیان میں کہا: 'جمعرات کو فوجیوں اور دہشت گردوں کا آمنا سامنا ہوا۔ دہشت گردوں نے ہتھ گولے داغے جس کے بعد طرفین کے مابین جھڑپ چھڑ گئی'۔دفاعی ترجمان نے کہا کہ جھڑپ کے دوران دو پاکستانی دہشت گرد مارے گئے جن کے قبضے سے دو اے کے 47 رائفلیں اور دیگر اسلحہ و گولہ بارود برآمد کیا گیا ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ علاقے میں وسیع تلاشی آپریشن جاری ہے۔



یاد رہے کہ نوبی کشمیر کے پلوامہ اور کولگام اضلاع میں دو شبانہ مسلح جھڑپوں کے دوران چار مقامی دہشت گرد مارے گئے ہیں۔یہ مسلح جھڑپیں ضلع پلوامہ کے پوچھل اور ضلع کولگام کے زوڈار علاقوں میں رونما ہوئی ہیں۔جموں و کشمیر پولیس کے ایک ترجمان نے بتایا کہ ضلع کولگام کے زوڈار میں ہونے والی ایک مسلح جھڑپ کے دوران لشکر طیبہ سے وابستہ دودہشت گرد مارے گئے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ اس دہشت گرد مخالف آپریشن میں کولگام پولیس اور فوج کی ایک آر آر نے حصہ لیا۔

پولیس ترجمان نے بتایا کہ ایسی ہی ایک جھڑپ ضلع پلوامہ کے پوچھل میں رونما ہوئی جس میں دو جنگجو مارے گئے۔اس دوران کشمیر زون پولیس کے انسپکٹر جنرل وجے کمار نے کہا کہ وادی میں پچھلے چوبیس گھنٹوں کے دوران پانچ دہشت گرد مارے گئے ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا: 'پولیس اور دیگر سکیورٹی فورسز ان آپریشن کے لئے مبارکبادی کے مستحق ہیں کیوں کہ ان کے دوران ہمارا یا عوام کا کوئی جانی نقصان نہیں ہوا'۔دریں اثنا دفاعی ترجمان لیفٹیننٹ کرنل عمران موسوی نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ جنوبی کشمیر کے دو اضلاع پلوامہ اور کولگام میں دوران شب تصادم آرائیوں کے دوران چار دہشت گردوں کو ہلاک کیا گیا۔
Published by: Mirzaghani Baig
First published: Jul 09, 2021 07:37 AM IST