ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

ملی ٹینسی کو بڑھاوا دینے اور سیکورٹی فورسز کو ڈیوٹی سے روکنے کے چلتے خاتون پولیس اہلکار گرفتار

خاتون پولیس اہلکار کئ سالوں سے محکمہ میں بحثیت ایس پی او تعینات تھی اور اپنی خدمات انجام دے رہی تھی تاہم ویڈیو کے وائرل ہونے سے ملی ٹینسی کو بڑھاوا دینے کا خدشہ ظاہر ہو رہا تھا۔

  • Share this:
ملی ٹینسی کو بڑھاوا دینے اور سیکورٹی فورسز کو ڈیوٹی سے روکنے کے چلتے خاتون پولیس اہلکار گرفتار
خاتون پولیس اہلکار کئ سالوں سے محکمہ میں بحثیت ایس پی او تعینات تھی اور اپنی خدمات انجام دے رہی تھی تاہم ویڈیو کے وائرل ہونے سے ملی ٹینسی کو بڑھاوا دینے کا خدشہ ظاہر ہو رہا تھا۔

کولگام: کولگام پولیس نے ایک خاتون پولیس اہلکار کو ملٹینسی کو بڑھاوا دینے اور دوران ڈیوٹی سیکورٹی فورسز کو روکنے کی پاداش میں گرفتار کرنے کے علاوہ اسے نوکری سے برطرف کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق سیکورٹی فورسز کو کریوا محلہ فرصل کولگام میں ملیٹنٹوں کی موجودگی کا پتہ چلا تھا جس کے بعد فورسز نے محاصرہ کیا اور تلاشی کاروائی شروع کی۔ اس دوران صائمہ اختر ساکنہ فرصل نامی خاتون نے سیکورٹی فورسز کو ڈیوٹی فرائض انجام دینے سے روکنے کی کوشش کی۔ ساتھ ہی مشتعل ہو کر فورسز کے خلاف بیان بازی کرنے کے علاوہ ایک ویڈیو عکس بند کیا اور اسے سوشل میڈیا پر وائرل کیا۔


پولیس کے مطابق خاتون نے تلاشی کاروائی میں رخنہ ڈالا اور ویڈیو کو وایریل کیا ساتھ ہی ملی ٹینسی مخالف آپریشن میں خلل ڈالا اور ان جرایم کے تحت اسے گرفتار کیا گیا۔ پولیس نے اس واقعے پرسنجیدہ نوٹس لیتے ہئے  خاتون ایس پی او کو گرفتار کرنے کے علاوہ اسے نوکری سے برخاست کر دیا۔ اس حوالے سے پولیس نے ایک ایف آئی آر زیر نمبر 19/2021 U/S 353 IPC, 13 UAP درج کر لیا ہے اور تحقیقات شروع کر دی ہے۔


خاتون پولیس اہلکار کئ سالوں سے محکمہ میں بحثیت ایس پی او تعینات تھی اور اپنی خدمات انجام دے رہی تھی تاہم ویڈیو کے وائرل ہونے سے ملی ٹینسی کو بڑھاوا دینے کا خدشہ ظاہر ہو رہا تھا۔ پولیس ذرائع کے مطابق ملی ٹینسی مخالف آپریشن میں رخنہ ڈالنے کی کسی کو اجازت نہیں دی جائے گی اور ساتھ ہی ایسے افراد سے پولیس قانونی طور سے نمٹنے کے لیے تیار ہے۔

Published by: Sana Naeem
First published: Apr 16, 2021 05:18 PM IST