உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Jammu and Kashmir: دہشت گردوں کے حملے میں ایک کشمیری ہندو راجپوت ہلاک، یہاں پڑھیں مکمل تفصیل

    Jammu and Kashmir: دہشت گردوں کے حملے میں ایک کشمیری ہندو راجپوت ہلاک

    Jammu and Kashmir: دہشت گردوں کے حملے میں ایک کشمیری ہندو راجپوت ہلاک

    مسلح دہشت گردوں نے دیر رات کاکرن کولگام میں ایک مقامی راجپوت ہندو پر گولیاں چلا کر اسے زخمی کر دیا۔ اگرچہ اسے فوری طور اسپتال میں داخل کیا گیا تاہم وہ زخموں کی تاب نالا کر دم توڑ بیٹھا۔ سیکورٹی فورسز نے پورے علاقے کا محاصرہ کرکے تلاشی کاروائی شروع کر دی ہے۔

    • Share this:
    کولگام: مسلح دہشت گردوں نے دیر رات کاکرن کولگام میں ایک مقامی راجپوت ہندو پر گولیاں چلا کر اسے زخمی کر دیا۔ اگرچہ اسے فوری طور اسپتال میں داخل کیا گیا تاہم وہ زخموں کی تاب نالا کر دم توڑ بیٹھا۔ سیکورٹی فورسز نے پورے علاقے کا محاصرہ کرکے تلاشی کاروائی شروع کر دی ہے۔ تفصیلات کے مطابق آج شام مسلح افراد نے کاکرن پمبی کولگام میں ستیش کمار سنگھ ولد سُریندر سنگھ پر نزدیک سے گولیاں چلا کر اسے زخمی کر دیا۔ اگرچہ اسے زخمی حالت میں کولگام اسپتال میں علاج کے لئے داخل کیا گیا۔



    تاہم سر پر گولی لگنے کی وجہ سے اسے تشویش ناک حالت میں اسکمز اسپتال سری نگر منتقل کیا گیا۔ ذرائع کے مطابق، ستیش کمار سنگھ زخموں کی تاب نا لا کر راستے میں ہی دم توڑ بیھا۔ ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ ستیش کمار سنگھ پیشے سے ایک ڈرائیور تھا اور یہاں مقامی سطح پر مقیم تھا۔ سیکورٹی فورسز نے پورے علاقے کو اپنی تحویل میں لے کر تلاشی کاروائی شروع کردی ہے۔ پولیس نے اس سلسلے میں کیس درج کر لیا ہے اور ملوث دہشت گردوں کی تلاش شروع کی ہے۔

    واضح رہے کہ اس سے قبل پلوامہ میں بھی غیر مقامی باشندوں اور ایک کشمیری پنڈت نوجوان پر حملہ کیا گیا۔ سابق وزرائے اعلیٰ عمر عبداللہ، محبوبہ مفتی اور دیگر سیاسی لیڈران نے ان واقعات کی پُر زور الفاظ میں مذمت کی ہے۔  بی جے پی،  اپنی پارٹی، پیپلز کانفرنس اور دیگر جماعتوں نے بھی ایسے حملوں کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے اسے انسانیت سوز قدم قرار دیا ہے۔ لیفٹنٹ گورنر منوج سنہا نے بھی اس حادثہ کی مذمت کی ہے۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: