ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں وکشمیر: پلوامہ کے اونتی پورہ میں تصادم، البدر کا ایک دہشت گرد ہلاک

سرکاری ذرائع نے بتایا کہ مچہامہ اونتی پورہ میں جمعرات کی صبح چھڑنے والے تصادم میں البدر نامی دہشت گرد تنظیم سے وابستہ ایک دہشت گرد مارا گیا۔ انہوں نے مہلوک دہشت گرد کی شناخت عرفان الحق ڈار ساکن چرسو اونتی پورہ کے بطور کی ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Sep 24, 2020 08:03 PM IST
  • Share this:
جموں وکشمیر: پلوامہ کے اونتی پورہ میں تصادم، البدر کا ایک دہشت گرد ہلاک
جموں وکشمیر: پلوامہ کے اونتی پورہ میں تصادم، البدر کا ایک دہشت گرد ہلاک

سری نگر: جنوبی ضلع پلوامہ کے مچہامہ اونتی پورہ میں جمعرات کی صبح ہونے والے ایک مسلح تصادم میں البدر نامی دہشت گرد تنظیم سے وابستہ ایک مقامی دہشت گرد مارا گیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ مچہامہ اونتی پورہ میں جمعرات کی صبح چھڑنے والے تصادم میں البدر نامی دہشت گرد تنظیم سے وابستہ ایک دہشت گرد مارا گیا۔ انہوں نے مہلوک  دہشت گرد کی شناخت عرفان الحق ڈار ساکن چرسو اونتی پورہ کے بطور کی ہے۔ سرکاری ذرائع نے کہا کہ مہلوک دہشت گرد نے سال رواں کے ہی 20 اگست کو  دہشت گردوں کی صفوں میں شمولیت اختیار کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ مہلوک دہشت گرد کو خود سپردگی کرنے کے لئے راضی کرنے پر ایک مقامی شخص کو جائے تصادم آرائی پر لایا گیا تھا، لیکن انہوں نے خود سپردگی کرنے سے انکار کیا۔


قبل ازیں کشمیر زون پولیس نے اپنے آفیشل ٹویٹر ہینڈل پر ایک ٹویٹ میں کہا: 'ترال انکاؤنٹر اپ ڈیٹ: مچہامہ تصادم بغیر کسی کو لیٹرل نقصان کے اختتام پذیر ہوا۔ اسلحہ و گولہ بارود برآمد، تلاشی آپریشن ہنوز جاری'۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ مچہامہ اونتی پورہ میں دہشت گردوں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر اونتی پورہ پولیس، فوج کی 42 راشٹریہ رائفلز اور 180 بٹالین سی آر پی ایف نے مذکورہ علاقے میں جمعرات کی صبح کارڈن اینڈ سرچ آپریشن شروع کیا۔ انہوں نے کہا کہ مشتبہ جگہ کو محاصرے میں لینے کے دوران وہاں موجود دہشت گردوں نے سیکورٹی فورسز پر فائرنگ کی، جس کے بعد طرفین کے درمیان باضابطہ طور پر مسلح تصادم چھڑ گیا۔



جموں وکشمیر کے جنوبی ضلع پلوامہ کے مچہامہ اونتی پورہ میں جمعرات کی صبح ہونے والے ایک مسلح تصادم میں البدر نامی دہشت گرد تنظیم سے وابستہ ایک مقامی دہشت گرد مارا گیا۔ فائل فوٹو
جموں وکشمیر کے جنوبی ضلع پلوامہ کے مچہامہ اونتی پورہ میں جمعرات کی صبح ہونے والے ایک مسلح تصادم میں البدر نامی دہشت گرد تنظیم سے وابستہ ایک مقامی دہشت گرد مارا گیا۔ فائل فوٹو


سری نگر اور پلوامہ میں مختلف مقامات پر این آئی اے کے چھاپے

سری نگر: قومی تحقیقاتی ایجنسی ( این آئی اے) نے جمعرات کی صبح شہر سری نگر میں مختلف مقامات پر تازہ چھاپے ڈالے۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ این آئی اے نے سی آر پی ایف اور پولیس کی ایک ٹیم کے ہمراہ جمعرات کی صبح ظہور احمد بٹ ساکن وزیر باغ سری نگر، بشیر احمد لون ساکن ہوکرسر متصل ڈون انٹرنیشنل اسکول، عارف احمد مسگر اور فضل الحق ساکن باغ سندر چھتہ بل سری نگر کی رہائش گاہوں پر چھاپے ڈالے۔ انہوں نے کہا کہ یہ تمام لوگ ایل او سی ٹریڈ سے وابستہ تھے۔ ایک رپورٹ کے مطابق این آئی اے نے جمعرات کی شام ضلع پلوامہ کے پانپور میں تجمعل مسعود ولد بہادر الدین مسعود اور مصدق مسعود ولد محمد افضل کے گھروں پر چھاپے ڈالے۔ آخری اطلاعات ملنے تک چھاپہ مار کارروائی جاری تھی۔ واضح رہے کہ این آئی اے اور انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ نے اب تک 30 تاجروں اور علاحدگی پسند لیڈروں کو مبینہ ملیٹنسی فنڈنگ کیس کے سلسلے میں گرفتار کیا ہے۔ سری نگر اور پاکستان مقبوضہ کشمیر کی راجدھانی مظفر آباد کے درمیان آر پار ایل او سی تجارت کو مرکزی حکومت نے مارچ 2019 میں بند کر دیا تھا۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Sep 24, 2020 07:47 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading