உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں و کشمیر میں اومیکرون کے خطرے سے نمٹنے کیلئے انتظامیہ متحرک، اٹھائے جا رہے ہیں یہ ٹھوس اقدامات

     محکمہ صحت و طبی تعلیم کے سیکریٹری وویک بھاردواج کا کہنا ہے کہ اومیکرون کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے تمام تر اقدامات مکمل کر لئے گئے ہیں۔ نیوز ایٹین اردو کے ساتھ بات کرتے ہوئے بھاردواج نے کہا کہ یو ٹی میں آر ٹی پی سی آر ٹیسٹنگ پہلے سے ہی جاری تھی اور اب اس میں مزید تیزی لائی جارہی ہے۔

    محکمہ صحت و طبی تعلیم کے سیکریٹری وویک بھاردواج کا کہنا ہے کہ اومیکرون کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے تمام تر اقدامات مکمل کر لئے گئے ہیں۔ نیوز ایٹین اردو کے ساتھ بات کرتے ہوئے بھاردواج نے کہا کہ یو ٹی میں آر ٹی پی سی آر ٹیسٹنگ پہلے سے ہی جاری تھی اور اب اس میں مزید تیزی لائی جارہی ہے۔

    محکمہ صحت و طبی تعلیم کے سیکریٹری وویک بھاردواج کا کہنا ہے کہ اومیکرون کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے تمام تر اقدامات مکمل کر لئے گئے ہیں۔ نیوز ایٹین اردو کے ساتھ بات کرتے ہوئے بھاردواج نے کہا کہ یو ٹی میں آر ٹی پی سی آر ٹیسٹنگ پہلے سے ہی جاری تھی اور اب اس میں مزید تیزی لائی جارہی ہے۔

    • Share this:
    ملک بھر کے ساتھ ساتھ جموں و کشمیر میں بھی کورونا وائرس کے نئے وئیرینٹ اومیکرون کے خطرے سے نمٹنے کے لئے انتظامیہ متحرک ہوچکی ہے۔ محکمہ صحت و طبی تعلیم کے سیکریٹری وویک بھاردواج کا کہنا ہے کہ اومیکرون کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے تمام تر اقدامات مکمل کر لئے گئے ہیں۔ نیوز ایٹین اردو کے ساتھ بات کرتے ہوئے بھاردواج نے کہا کہ یو ٹی میں آر ٹی پی سی آر ٹیسٹنگ پہلے سے ہی جاری تھی اور اب اس میں مزید تیزی لائی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آر ٹی پی سی آر ٹیسٹ کی رپورٹ اب ایک دن میں ہی مہیا کرائی جارہی ہے۔ سیکریٹری نے کہا کہ جموں و کشمیر میں کورونا وبا کی دوسری لہر کے دوران ڈی آر ڈی او کی جانب سے دو خصوصی اسپتال قائم کئے گئے ہیں جہاں صرف کووڈ سے متاثرہ افراد کا علاج و معالجہ کیا جا رہا ہے۔ ان میں سے ایک اسپتال جموں جبکہ دوسر اسپتال کشمیر میں قائم کیا گیا ہے اور ان دونوں ہسپتالوں میں طی اور نیم طبی عملہ تعینات ہے ۔

    وویک بھاردواج نے کہا کہ مرکز کی ہدایت پر سرینگر بین الا اقوامی ہوائی اڈے اور جموں کے ہوائی اڈے پر بیرون ممالک سے آنے والے مسافروں کی جانچ کرنے کے لئے محکمہ صحت کی جانب سے ٹیسٹنگ کی بھر پور سہولیات دستیاب رکھی گئی ہں اور دن رات طبی عملہ ان دونوں ہوائی اڈوں پر تعینات رہتا ہے۔ بیروں ممالک سے سفر کرکے جموں و کشمیر میں داخل ہونے والے ہر مسافر کی آر ٹی پی سی آر ٹیسٹنگ انجام دی جارہی ہے۔

     



    سیکریٹری نے کہا کہ بیروں ممالک سے آنے والے مسافروں کو لازمی طور کورنٹائن کرنے کے لئے یو ٹی میں آٹھ کورنٹائن سینٹر قائم کئے گئے ہیں جن میں سے دو سرینگر کے صنعت نگر اور بلوارڈ روڈ پر قائم کئے گئے ہیں جبکہ باقی ماندہ کورنٹائن سینٹر جموں شہر میں قائم کئے گئے ہیں۔

    انہوں نے کہا حالانکہ ابھی تک جموں و کشمیر میں اومکران سے متاثرہ کوئی بھی فرد نہیں ملا ہے تاہم انتظامیہ تمام تر احتیاطی تدابیر کا خیال رکھ رہی ہے۔ وویک بھاردواج نے لوگوں سے اپیل کی کہ وہ کووڈ ضوابط کا خاص دھیان ریکھی ۔ ماسک کا پابندی سے استعمال کریں اور بھیڑ بھاڑ سے دور رہیں۔ ڈیویژنل کمشنر پی کے پولے نے کل سرینگر کے بین الااقوامی ہوائی اڈے کا دورہ کرکے بیرون ممالک سے آنے والے سیاحوں اور دیگر مسافروں کی جانچ کے لئے کئے گئے انتظامات کا جائزہ لیا۔

    انہوں نے ائیر پورٹ اتھارٹی آف انڈیا کے افسران، انتظامیہ اور محکمہ صحت کے اہلکاروں کی ایک میٹنگ کے دوران ان سے تاکید کی کہ وہ اومکران کے پھیلائو کو روکنے کے لئے تمام تر احتیاطی تدابیر کو یقینی بنائیں۔ واضح رہے کہ آنے والے دنوں میں بیرون ممالک سے کشمیر کی سیر پر آنے والے سیاحوں کی تعداد بڑھ سکتی ہے لہذا انتظامیہ ہوائی اڈے پر زبردست چوکسی برت رہی ہے۔

    قومی، بین الااقوامی، جموں و کشمیر کی تازہ ترین خبروں کے علاوہ  تعلیم و روزگار اور بزنس  کی خبروں کے لیے  نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: