உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Jammu and Kashmir: کابل پر طالبان کے قبضے پر ہندوستانی فوج کا بڑا بیان، کہا- فکرمند نہ ہوں

    ہندوستانی فوج کے لیفٹیننٹ جنرل ڈی پی پانڈے نے کہا کہ ’ایک بات یاد رکھیں کہ یہاں (جموں وکشمیر میں) سیکورٹی صورتحال ہمارے کنٹرول میں ہے اور اس بارے میں کسی کو فکر مند ہونے کی ضرورت نہیں ہے‘۔

    ہندوستانی فوج کے لیفٹیننٹ جنرل ڈی پی پانڈے نے کہا کہ ’ایک بات یاد رکھیں کہ یہاں (جموں وکشمیر میں) سیکورٹی صورتحال ہمارے کنٹرول میں ہے اور اس بارے میں کسی کو فکر مند ہونے کی ضرورت نہیں ہے‘۔

    ہندوستانی فوج کے لیفٹیننٹ جنرل ڈی پی پانڈے نے کہا کہ ’ایک بات یاد رکھیں کہ یہاں (جموں وکشمیر میں) سیکورٹی صورتحال ہمارے کنٹرول میں ہے اور اس بارے میں کسی کو فکر مند ہونے کی ضرورت نہیں ہے‘۔

    • Share this:
      سری نگر: ہندوستانی فوج (Indian Army) نے اتوار کو کہا کہ کشمیر وادی (Kashmir Valley) میں سیکورٹی کی صورتحال کنٹرول میں ہے اور کابل پر طالبان (Taliban) کے قبضے کے بعد فکر مند ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ آرمی کی 15 ویں کور (چنار کاپرس) کے جنرل کمانڈنگ آفیسر لیفٹیننٹ جنرل ڈی پی پانڈے (DP Pandey) نے سری نگر میں منعقدہ ایک تقریب میں یہ بات کہی۔ دراصل، جی او سی ڈی پی پانڈے کشمیر پریمیئر لیگ ٹورنا منٹ (Kashmir Premier League Tournament) کے فائنل میچ میں مہمان خصوصی (چیف گیسٹ) کے طور پر شامل ہوئے تھے، یہ میچ شیرکشمیر اسٹیڈیم میں کھیلا گیا۔ اس موقع پر افغانستان کے اقتدار پر طالبان کے قبضے کے بعد کشمیر میں تحفظاتی اداروں کے لئے چیلنجز سے متعلق ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا، ’یہ ایک کھیل کا میدان ہے اور میں باہری سرگرمیوں پر تبصرہ نہیں کرنا چاہتا۔ تاہم ایک بات یاد رکھیں کہ یہاں سیکورٹی کی صورتحال ہمارے کنٹرول میں ہیں اور اس بارے میں کسی کو فکر مند ہونے کی ضرورت نہیں ہے‘۔

      این ڈی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق، لیفٹیننٹ جنرل پانڈے نے وادی کے نوجوانوں سے کھیلوں پر توجہ مرکوز کرنے کی اپیل کی اور امید کا اظہار کیا کہ مستقبل میں نیرج چوپڑا کی طرح کشمیر سے بھی اولمپک گولڈ جیتنے والے نوجوان کھلاڑی نکلیں گے۔ انہوں نے کہا، ’آج ملک میں یوم قومی کھیل منایا جا رہا ہے اور اس فائنل میچ کے انعقاد کے لئے اس سے بہتر دن نہیں ہوسکتا تھا۔ میں اس موقع پر نوجوانوں سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ کھیلوں پر توجہ دیں اور صرف کرکٹ پر فوکس نہ کریں، تاکہ کشمیر وادی سے بھی نیرج چوپڑا کی طرح گولڈ جیتنے والے کھلاڑی نکلیں‘۔

      فوجی افسر نے کہا کہ کھیل نظم وضبط سکھاتا ہے اور جموں وکشمیر کے جو نوجوان کھیلوں کی صلاحیت رکھتے ہیں، وہ اپنے لئے شہرت اور مقبولیت حاصل کرنے کے لئے کھیلوں میں اپنا نام بنائیں۔ ڈی پی پانڈے نے وادی کے نوجوانوں کو یوسف پٹھان سے ترغیب حاصل کرنے کو کہا، تقریب میں سابق بین الاقوامی کرکٹر یوسف پٹھان بھی شامل ہوئے تھے۔

      ڈی پی پانڈے نے مزید کہا، ’میری اور آپ کی طرح یوسف پٹھان بھی ایک چھوٹے سے گاوں سے نکلے اور اپنی محنت سے بلندیوں کو حاصل کیا۔ میں امید کرتا ہوں کہ آپ ان سے سیکھیں گے اور ایک بہترین شہری اور کھلاڑی بننے کی سمت میں پورے نظم وضبط کے ساتھ آگے بڑھیں گے اور ملک کا نام روشن کریں گے‘۔ صحافیوں سے بات چیت میں یوسف پٹھان نے کہا کہ جموں وکشمیر میں بہت باصلاحیت کھلاڑی ہیں۔

      واضح رہے کہ یوسف پٹھان کے بھائی عرفان پٹھان کو جموں وکشمیر کرکٹ ایسوسی ایشن نے مرکز کے زیرانتظام ریاست کی کرکٹ ٹیم کے لئے پلیئر کم مینٹر کے طور پر تقرر کیا تھا۔ یوسف پٹھان نے کہا، ’میں نے عرفان سے اس بارے میں جانا ہے۔ جموں وکشمیر کے دو سے تین لڑکے آئی پی ایل کھیل رہے ہیں۔ یہ اچھا اشارہ ہے اور یہاں کافی باصلاحیت کھلاڑی ہیں۔ جس طرح سے آرمی ٹورنامنٹ کا انعقاد کر رہی ہیں اور اس میں 200 ٹیمیں حصہ لے رہی ہیں۔ اس کی تعریف ہونی چاہئے اور صلاحیتوں کو بڑھا دیا جانا چاہئے‘۔

      یوسف پٹھان نے کہا کہ نوجوانوں کو آگے بڑھنے کے لئے آرمی بہت محنت کر رہی ہے اور اس کوشش کا فائدہ ملے گا۔ سابق کرکٹر نے کہا، ’کرکٹ کو آگے بڑھانے کے لئے لوگ بہت محنت کر رہے ہیں۔ ہر کوئی چاہتا ہے کہ یہاں آئی پی ایل میچ، قومی اور بین الاقوامی میچوں کا انعقاد ہو۔ ظاہر ہے کہ ایک بار انفراسٹرکچر بن جانے کے بعد بڑے مقابلوں کا بھی انعقاد ہوگا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: