ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

اننت ناگ میں دردناک حادثہ ، بیٹی کو ڈوبتا دیکھ کر ماں نے دریائے جھیلم میں لگائی چھلانگ ، دونوں کی موت

عینی شاہدین کے مطابق بیٹی نہانے کے دوران دریائے جھیلم کی گہری سطح کی جانب پھسل گئی اور بیٹی کو مصیبت میں دیکھ کر کچھ سوچے بغیر اس کی ماں سلیمہ نے جان کی پروا کئے بغیر دریائے جھیلم میں چھلانگ لگادی ۔

  • Share this:
اننت ناگ میں دردناک حادثہ ، بیٹی کو ڈوبتا دیکھ کر ماں نے دریائے جھیلم میں لگائی چھلانگ ، دونوں کی موت
اننت ناگ میں دردناک حادثہ ، بیٹی کو ڈوبتا دیکھ کر ماں نے دریائے جھیلم میں لگائی چھلانگ ، دونوں کی موت

اننت ناگ : جنوبی کشمیر کے اننت ناگ ضلع کے مرہامہ بجبہاڑہ علاقہ میں ایک دردناک سانحہ میں ماں اور بیٹی دریائے جھیلم میں غرق آب ہو کر لقمہ اجل بن گئیں ۔ تفصیلات کے مطابق مرہامہ کی سلیمہ زوجہ غلام حسن ڈار نامی خاتون دریائے جھیلم کے کنارے سبزی دھو رہی تھی جبکہ اس کی 12 سالہ بیٹی نکہت اس دوران دریا کے کنارے پر ہی نہا رہی تھی ۔ لیکن قدرت نے کچھ ایسا کھیل کھیلا کہ دونوں ماں بیٹی دریائے جھیلم کی خاموش گہرائی میں کچھ اس طرح سما گئیں کہ ان کو اپنی جانوں سے ہاتھ دھونا پڑا ۔


عینی شاہدین کے مطابق نکہت نہانے کے دوران دریائے جھیلم کی گہری سطح کی جانب پھسل گئی اور بیٹی کو مصیبت میں دیکھ کر کچھ سوچے بغیر اس کی ماں سلیمہ نے جان کی پروا کئے بغیر دریائے جھیلم میں چھلانگ لگادی اور اپنی بیٹی کو بچانے کی کوشش کرنے لگی ۔ لیکن قدرت کو کچھ اور ہی منظور تھا اور قدرت کے سامنے سلیمہ جیسی باہمت ماں کی ایک نہ چل سکی اور وہ بھی دریائے جھیلم کی گہرائی میں غرق آب ہوگئیں ۔


واقعہ کے فوراً بعد مقامی لوگ کشتیوں میں سوار ہو کر دونوں ماں بیٹی کو بچانے کیلئے آ گئے اور اس دوران پولیس و ایس ڈی آر ایف کی ٹیمیں بھی ریسکیو آپریشن میں مصروف ہو گئیں اور کافی مشقت کے بعد اگرچہ سلیمہ کی لاش دریائے جھیلم سے نکال لی گئی ۔ تاہم اس کی بیٹی نکہت کا خبر لکھے جانے تک کوئی پتہ نہیں تھا ۔


اس دوران رات کی تاریکی کی وجہ سے اگرچہ ریسکیو آپریشن کو ملتوی کردیا گیا ۔ تاہم انتظامیہ کا کہنا ہے کہ صبح سویرے ریسکیو آپریشن کا دوبارہ آغاز کیا جائے گا اور نکہت کا سراغ لگانے کی ہر ممکن کوشش کی جائے گی ۔
First published: Jun 16, 2020 11:18 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading