உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J&K News: بڈگام کے کانہامہ ماگام میں بزم شیرین کاوسہ خالصہ کشمیر کی طرف سے یوم احمد کانہامی کا انعقاد

    J&K News: بڈگام کے کانہامہ ماگام میں بزم شیرین کاوسہ خالصہ کشمیر کی طرف سے یوم احمد کانہامی کا انعقاد

    J&K News: بڈگام کے کانہامہ ماگام میں بزم شیرین کاوسہ خالصہ کشمیر کی طرف سے یوم احمد کانہامی کا انعقاد

    Jammu and Kashmir : بزم شیرین کاوسہ خالصہ کشمیر کی جانب سے گورنمنٹ پرائمری اسکول پرے محلہ کانہامہ میں یوم احمد صاحب کانہامہ کا انعقاد کیا گیا۔ یہ تقریب تین نشستوں پر مشتمل تھی۔

    • Share this:
    بڈگام : بزم شیرین کاوسہ خالصہ کشمیر کی جانب سے گزشتہ روز گورنمنٹ پرائمری اسکول پرے محلہ کانہامہ میں یوم احمد صاحب کانہامہ کا انعقاد کیا گیا۔ یہ تقریب تین نشستوں پر مشتمل تھی۔ پہلی نشست میں احمد صاحب کے حوالے سے مقالات پڑھے گئے۔ مقالات پیش کرنے والوں میں ڈاکٹر غلام نبی حلیم اور رحیم رہبر قابل ذکر ہیں۔ اس نشست کی صدارت کشمیر کے معروف ادیب سید بشیر کوثر نے کی۔ جبکہ اس نشست میں وادی کے مشہور شاعر شہناز رشید مہمان خصوصی کی حیثیت سے اور ڈاکٹر غلام نبی حلیم مہمان ذی وقار کی حیثیت سے موجود رہے۔ ایوان صدارت میں پیر طریقت شیخ غلام رسول المعروف لسہ بب ، گلشن بدرنی ، میر شبیر اور رحیم رہبر کے علاوہ غلام محی الدین میر بھی موجود رہے۔

     

    یہ بھی پڑھئے : Amarnath Yatra 2022: پہلے دن ہزاروں یاتریوں نے امرناتھ گپھا میں مقدس شیو لنگم کے کئے درشن


    نشست کے آخر میں بزم شیرین کاسالانہ ایوارڈ وادی کے چار بلند پایہ ادیب اور شعراء کو دیا گیا ، جن میں شاعری کے میدان  میں شہناز رشید ، تنقید میں  ڈاکٹر غلام نبی حلیم، گلشن بدرنی کو بحیثیت کلچرل ایکٹوسٹ اور لسہ بب کو صوفیت کے میدان میں غیر معمولی کارکردگی کیلئے اعزازات دئے گئے۔ اس کے علاوہ الیکٹرانک میڈیا میں نیوز18 اردو کے نمائندے منیر حسین حرہ اور پرنٹ میڈیا میں روزنامہ تعمیل ارشاد کے ایڈیٹر ناظم نظیر کو بھی اعزازات سے نوازا گیا۔ بزم شیرین کے اہم ممبران کی بھی حوصلہ افزائی کی گئی۔ جن میں صدر عبدالاحد، سیکریٹری محمد یوسف ملک، عمران کھانڈے، غلام نبی لون، مدثر احمد شیخ، فیاض احمد وغیرہ شامل ہیں۔ علاقائی سطح پر بھی چند افراد کیلئے اسناد جاری کئے گئے، جن میں غلام محی الدین میر کانہامی ، غلام محی الدین خان اور غلام محمد شیخ شامل ہیں۔

     

    یہ بھی پڑھئے : دی بوائز نیکسٹ ڈور سے رہیں ہوشیار، کون ہے ہائبرڈ دہشت گرد؟


    دوسری نشست میں ایک محفل حمد و نعت کا انعقاد کیا گیا، جس کی صدارت میر غلام محمد سنوری نے کی۔ صدارتی ایوان میں نزیر شاہد، لطیف نیازی، عبدالغفار، ڈار کانہامی، دلبر پوشکری وغیرہ شامل تھے۔ اس مشاعرے میں جن شعرا نے اپنا کلام پیش کیا ان میں عبدالاحد شہباز ،اکبر کلان، خورشید خاموش، عاشق کاوسی، اعجاز سنوری ،فیاض احمد، غلام نبی لون، عبدالمجید کانہامی، مقبول شیدا،عاشق حسین، عتیق اللہ عتیق شامل تھے۔ دن بھر کی کاروائی کی نظامت خورشید خاموش نے انجام دی۔

    مشاعرے کے فوراً بعد بہت سے نعت خواں بھی شامل پروگرام ہوئے، جن میں ریحانہ کوثر، نورین جبین، مولوی بشیر ،عاشق احمد ، شاہد، ریاض احمد حجام ، محمد سلیم وغیرہ شامل تھے۔ میر غلام رسول نے تحریک شکرانہ پیش کی۔ آخری نشست میں شب بھر محفل سماع کا انعقاد کیا گیا ، جس میں سرکردہ موسیقی کاروں نے اپنی آواز کے جلوے بکھیرے ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: