உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J&K News: منشیات سے دور رہنے اور نوجوان کو اسپورٹس کی جانب راغب کرنے کیلئے سائیکل ریس کا انعقاد

    J&K News: منشیات سے دور رہنے اور نوجوان کو اسپورٹس کی جانب راغب کرنے کیلئے سائیکل ریس کا انعقاد

    J&K News: منشیات سے دور رہنے اور نوجوان کو اسپورٹس کی جانب راغب کرنے کیلئے سائیکل ریس کا انعقاد

    Jammu and Kashmir : وادی کے نوجوان سماجی کارکن سید علی اصغر رضوی کی جانب سے ایک انوکھی پہل کے تحت سائیکل اسٹرائیک کے دوسرے ایڈیشن کے نام سے وادی کشمیر کے نوجوانوں کو منشیات اور دوسرے جرائم سے دور رہنے اور انہیں کھیل کود کی جانب راغب کرنے کے لئے سائیکل ریس کا اہتمام کیا گیا ۔

    • Share this:
    گلمرگ : وادی کے نوجوان سماجی کارکن سید علی اصغر رضوی کی جانب سے ایک انوکھی پہل کے تحت سائیکل اسٹرائیک کے دوسرے ایڈیشن کے نام سے وادی کشمیر کے نوجوانوں کو منشیات اور دوسرے جرائم سے دور رہنے اور انہیں کھیل کود کی جانب راغب کرنے  کے لئے سائیکل ریس کا اہتمام کیا گیا ۔ اس ریس کا آغاز رضوی اسٹاف ماگام بڈگام سے ہوا اور  سیاحتی مقام گلمرگ بارہمولہ میں یہ اختتام پذیر ہوئی ۔ گلمرگ تک سطح سمندر سے آٹھ ہزار سات سو فٹ کی بلندی کا سفر طے کرکے اپنی نوعیت کی یہ انوکھی پہل مانی جاتی ہے۔ منشیات مخالف عالمی دن کے حوالے سے یہ ریس کافی اہمیت کی حامل مانی جاتی ہے۔ اس میں نوجوانوں کو منشیات سے دور رہنے کی ترغیب دی جاتی ہے۔ تیس کلومیٹر کی ریس میں ایک سو کے قریب سائیکلسٹس نے حصہ لیا، جن میں قومی و بین الاقوامی سائیکلسٹ بھی شامل تھے۔

     

    یہ بھی پڑھئے: بے گناہ کو چھیڑو مت اور گنہگار کو کسی بھی حال میں چھوڑو مت : منوج سنہا


    اہم بات یہ ہے کہ اس ریس میں پچاس برس کی عمر کے بشارت حسین نے بھی حصہ لیا۔ جنہوں نے واضح پیغام دیا کہ اسپورٹس میں عمر کا کوئی لحاظ نہیں ہوتا۔ نوجوان سائیکلسٹس میں کافی جوش نظر آیا ۔ انہوں نے خوشی کا اظہار کیا۔ پہلی پوزیشن حاصل کرنے والے وحید احمد نے نیوز18 اردو کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ انہیں آج بہت خوشی ہوئی کہ انہوں نے اس ریس میں پہلی پوزیشن حاصل کی۔ انہوں نے کہا کہ کافی مدت کے بعد میں نے ایسی ریس جو پلین ایریا سے پہاڑی تک ہوئی ہے ، بہت مزہ آیا ۔

    ایک اور سائیکلسٹ نے نیوز18 اردو کو بتایا کہ کافی اچھا لگا کہ کچھ رضاکار انہیں موقع دے رہے ہیں تاکہ وہ اپنی صلاحیتیں دکھاسکیں ۔ اس مقابلے میں عمر کی کوئی قید نہیں تھی اس میں پینتالیس سالہ بشارت حسین نے بھی حصہ لیکر نوجوانوں کی توجہ اپنی جانب مرکوز کی۔ سماجی کارکن سید علی اصغر رضوی نے کہا کہ نوجوان نسل کو غلط کاموں سے دور رکھنے کے لئے اس طرح کے اقدام اٹھائے جارہے ہیں اور ان کی کوشش نوجوانوں کو سائیکلنگ کی جانب راغب کرنا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ آگے چل کر بھی وہ اس پہل کو جاری رکھیں گے۔ ان سائیکلسٹس کو مشہور ماہر امتیاز ڈار تربیت اور جسمانی فٹنس فراہم کررہے تھے۔

     

    یہ بھی پڑھئے: بڈگام کے ماگام کی تاریخ میں اپنی نوعیت کا پہلا ٹریڈ یونین انتخاب


    اختتامی تقریب پر کمشنر ٹرانسپورٹ کشمیر بوپندر کمار مہمان خصوصی تھے۔ گلمرگ گنڈولہ کے منیجنگ ڈائریکٹر وگلمرگ ڈیولپمنٹ اتھارٹی کے چیف ایکزیکٹیو افسر غلام جیلانی زرگر، جموں و کشمیر بنک کے صدر اور دیگر افسران بھی موجود تھے۔ پوزیشن حاصل کرنے والوں کو اعزازات سے نوازا گیا۔ بوپندر کمار نے اس ریس کے انعقاد پر خوشی کا اظہار کیا۔ ان کا کہنا ہے کہ کشمیر کے نوجوانوں میں کافی صلاحیتیں موجود ہیں۔

    بوپندر کمار نے نیوز18 اردو کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں چاہئے اور ہمارے نوجوانوں کو چاہئے کہ کھیل کود پر خصوصی توجہ دیں اور جسمانی طور مضبوط رہنے پر بھی توجہ دیں۔ یہی مضبوط معاشرے کی مضبوط نشانی ہے ۔ وادی کشمیر میں ہر طرح کے کھیل میں یہاں کے نوجوانوں میں صلاحتیں موجود ہیں ، بس ان صلاحیتوں کو نکھارنے اور بہتر پلیٹ فارم فراہم کرنے کی ضرورت ہے۔

    سائیکلنگ میں وادی کے کئی سائیکلسٹ نے بین الاقوامی سطح پر اپنا لوہا منوایا ہے۔ دیگر نوجوانوں کو بھی اس میدان اپنا نام کمانے کے لئے راغب کرنے کی ضرورت ہے۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: